پیر 19ستمبر 2011ء
پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے قائد اسفندیار ولی خان نے ایم کیو ایم کے سر
براہ کی جانب سے اے این پی کے خلاف عائد کئے جانیوالے الزامات واپس لینے کا خیر
مقدم کیا ہے اور اسے ایک خوش آئند اقدام قرار دیا ہے ‘ مرکز ی میڈ یا سیل سے جاری
کئے گئے ایک بیان میں عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی صدر اسفندیار ولی خان نے اس امید
کا اظہار کیا کہ سیاسی محاذ آرائی میں کمی سے کراچی میں پائیدار امن کی راہ ہموار
ہوگی ‘ جمہوریت مستحکم ہو گی اور پاکستان کے حقیقی اور بنیاد ی مسائل حل کرنے میں
مدد ملے گی ‘ اسفندیار ولی خان نے اس توقع کا اظہار کیا کہ جمہوری سوچ رکھنے والے
ایک دوسرے کا میڈیا ٹرائل نہیں کرینگے ‘ جہاں تک اے این پی کا تعلق ہے تو وہ پر امن
بقائے باہمی کے اصول پر کاربندہے ‘ اور رنگ ‘ نسل ‘ زبان ‘ عقیدے اور مذہب کی بنیاد
پر پاکستان کے کسی بھی شہری کے ساتھ امتیازی سلوک کو قابل مذمت گردانتی ہے ‘ انہوں
نے کہا کہ ملک کو اس وقت جس قسم کے اندرونی اور بیرونی چیلنجز کا سامنا ہے اس کا
تقاضاہے کہ سیاسی جماعتیں مفاہمت کو فروغ دیں اور عداوت و دشمنی کو بڑھاوا دینے کے
بجائے سنجیدگی سے سر جوڑ کر بیٹھیں تاکہ اجتماعی دانش کے ذریعے ملک کو در پیش
گھمبیر مسائل کا حل نکالا جاسکے ۔
جاری کردہ

مرکزی میڈیا سیل
باچا خانؒ مرکز پشاور