پریس ریلیز
مورخہ 02 مارچ 2011ءبروز بدھ
پشاور (پ ر) عوامی نیشنل پارٹی ضلع شانگلہ کے جنرل کونسل کا اجلاس وزیر اعلیٰ
انیکسی میں زیر صدارت ضلعی صدر حاجی سید فرین خان منعقد ہوا۔ اجلاس میں اے این پی
کے صوبائی صدر سینیٹر افراسیاب خٹک‘ صوبائی جنرل سیکرٹری تاج الدین خان‘ اے این پی
شانگلہ کے تمام یونین کونسلوں کے صدور‘ جنرل سیکرٹریوں اور ضلعی جنرل کونسل کے
ممبران نے شرکت کی۔ اجلاس میں PK-87 شانگلہ ون کے الیکشن کا جائزہ لیا گیا اور تمام
یونین کونسل صدور نے اپنے اپنے رائے کا اظہار کیا۔
عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی صدر سینیٹر افراسیاب خٹک نے ضلعی جنرل کونسل کے اجلاس
سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اے این پی ےی کے مثبت اور انسان دوست پالیسیوں کی بدولت
روز بروز عوام میں مقبول ہو رہی ہے اور اے این پی پختونوں کا واحد نمائندہ جماعت ہے
اور صوبے کے عوام کے مسائل حل کرنے کی بھرپور صلاحیت رکھتی ہے۔ اے این پی کے صوبائی
سربراہ نے کہا کہ اے این پی نے اپنی سیاسی جنگ جیت لی ہے اور ہم نے اپنے انتخابی
منشور میں عوام سے جو وعدے کئے تھے وہ ہم نے پورے کئے ہیں جن میں 18ویں اور 19 ویں
ترمیم کی متفقہ طور پر منظوری‘ کنکریٹ لسٹ کا خاتمہ‘ وفاق سے بجلی کے مد میں 110
ارب روپے کی وصولی‘ صوبے کے عوام کو ان کی شناخت خیبر پختون خوا اور صوبائی
خودمختاری سرفہرست ہیں۔
ان خیالات کا اظہار اُنہوں نے وزیر اعلیٰ انیکسی میں پارٹی کے ضلعی جنرل کونسل کے
اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اُنہوں نے کہا کہ اے این پی پختون سرزمین پر قیام امن
کو یقنی بنانے کےلئے اپنی جدوجہد جاری رکھے گی اور پختون سرزمین کو جنت کا گہوارہ
بنائے گی۔ دہشت گردی کے خاتمے کےلئے قبائلی علاقہ جات سے دہشت گردی کے اڈوں کا
خاتمہ کرنا اشد ضروری ہے۔ ملک میں اُس وقت تک ترقی کا خواب شرمندہ تعمیر نہیں ہو
سکتا جب تک دہشت گردی کا مکمل خاتمہ اور قیام امن کو یقنی نہ بنایا جائے۔ اجلاس سے
اے این پی پختون خوا کے جنرل سیکرٹری تاج الدین خان اور اے این پی ضلع شانگلہ کے
صدر حاجی سید فرین خان نے بھی خطاب کیا۔
جاری کردہ

ANP میڈیا سیل
باچا خان مرکز پشاور