پریس ریلیز
پشاور۔30 نومبر2011 ء
عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی انتخابات کےلئے مرکزی کونسل کا اجلاس بدھ کے روز وزیر
اعلیٰ ہاوس کے سبز زار میں منعقد ہوا ۔ مرکزی الیکشن کمیشن کے چیئرمین سینٹر حاجی
محمد عدیل کی نگرانی میں پارٹی کے انتخابات کا عمل اختتام پذیر ہوا جس کے مطابق اے
این پی کے مرکزی صدر اسفندیار ولی خان، سینئر نائب صدر حاجی محمد عدیل، جنرل
سیکرٹری احسان وائیں، سیکرٹری اطلاعات زاہد خان اگلی مدت کے لئے بھی بلامقابلہ
منتخب کر لئے گئے۔

دیگر عہدیداران میں ایڈیشنل جنرل سیکرٹری تاج الدین خان،
ڈپٹی جنرل سیکرٹری نوابزادہ محسن علی خان، سیکرٹری مالیات ہاشم بابر، خارجہ اُمور
کے سیکرٹری ڈاکٹر حیدر علی، ثقافتی اُمور کے سیکرٹری عصمت اﷲ خان اور اُمور محنت کے
سیکرٹری رانا گل آفریدی بلامقابلہ منتخب ہوئے ۔ نائب صدور میں خیبر پختونخوا سے
بشری گوہر، ظاہر شاہ، سند ھ سے اورنگزیب خان ، پنجاب سے ریاض اے شیخ، بلوچستان سے
کمانڈر خداداد خان، سرائیکی بیلٹ سے فرح اعجاز، محمد یامین خان شامل ہیں, جبکہ خیبر
پختونخوا سے جمیلہ گیلانی، خان نواب، سندھ سے فاروق بنگش،
پنجاب سے لالہ ظاہر خان، بلوچستان سے رشید خان ناصر، سرائیکی بیلٹ سے انیلا ندیم
اور ڈاکٹر واجد علی خان بلامقابلہ جائنٹ سیکرٹریز منتخب کئے گئے ۔

اے این پی کے آئین میں ترمیم کے بعد پانچوں وحدتوں سے
نائب صدر اور جائنٹ سیکرٹری کے عہدوں پر خواتین کے لئے ایک ایک نشست مختص کرنے کا
فیصلہ کیا گیا سندھ ، پنجاب ، بلوچستان سے خواتین عہدیداروں کے نام بعد میں مرکزی
ورکنگ کمیٹی کو بھیجوائے جائیں گے اور اُن کا اختیار ورکنگ کمیٹی کو دے دیا گیا ہے
علاوہ ازیں ایک اور ترمیم کے تحت پارٹی کے مرکزی صدر کو اختیار دیا گیا کہ وہ جب
بھی ضرورت محسوس کریں اپنی معاونت کے لئے کوئی کمیٹی یا کمیٹیاں تشکیل دے سکتے ہیں
۔