عوام کی طرف سے ممبر سازی میں غیر معمولی دلچسپی اے این پی پر ان کے اعتماد کا مظہر ہے۔

ممبر سازی بروقت مکمل کی جائے گی، مہم صوبے کے کونے کونے میں زور و شور سے جاری ہے ۔

اے این پی جمہوری اور تنظیمی پارٹی ہے، کارکن ہر چار سال بعد آزادانہ رائے کے ذریعے تنظیمیں بناتے ہیں۔

کارکن گھر گھر پارٹی کا پیغام پہنچائیں اور زیادہ سے زیادہ افراد کو پارٹی کا حصہ بنائیں۔

خواتین اور اقلیتی برادری کی اے این پی میں بھرپور شرکت کیلئے کارکنان میدان میں نکلیں،بونیر میں تقریب سے خطاب

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی جنرل سیکرٹری و چیئرمین صوبائی الیکشن کمیشن سردار حسین بابک نے کہا ہے کہ صوبے کے کونے کونے میں اے این پی کی ممبر سازی مہم زور وشور سے جاری ہے اور عوام کی طرف سے ممبر سازی میں غیر معمولی دلچسپی اے این پی پر ان کے اعتماد کا مظہر ہے، ان خیالات کا اظہار انہوں نے موضع سورا تحصیل مندنڑ بونیر میں پارٹی رہنما امیر سلطان خان کے حجرے میں ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا،اس موقع پر انہوں نے پارٹی کارکنوں کو ہدایت کی کہ وہ ممبر سازی مہم کے دوران گھر گھر اے این پی کا پیغام پہنچائیں اور عوام کی زیادہ سے زیادہ تعداد کو پارٹی کا حصہ بنانے کیلئے دن رات انتھک محنت کریں ، سردار حسین بابک نے کہا کہ اے این پی ایک جمہوری اور تنظیمی پارٹی ہے اور اس کے کارکن ہر چار سال بعد آزادانہ رائے کے ذریعے اپنے لئے تنظیمیں بناتے ہیں ، انہوں نے ملکی و بین الاقوامی غیر سرکاری تنظیموں کو اے این پی کی ممبر سازی مہم میں شرکت کی دعوت دی اور کہا کہ وہ آئیں اور اے این پی میں ہونے والے اس جمہوری عمل کا خود جائزہ لیں،انہوں نے اس عزم کا اظہار کیا کہ ممبر سازی کا عمل بروقت اور شفاف طریقے سے مکمل کیا جائے گا ، سردار بابک نے کہا کہ اس بار ممبر سازی مہم میں خواتین اور اقلیتی برادری کو پارٹی کا حصہ بنانے پر خصوصی توجہ دی جا رہی ہے اور پارٹی کی خواتین رہنماؤں کو اس حوالے سے کام کرنا چاہئے اور ممبر سازی کے عمل میں اس بات کو یقینی بنایا جائے کہ کوئی بھی ممبر سازی کے عمل سے محروم نہ رہے ، انہوں نے کہا کہ اے این پی واحد پارٹی ہے جس میں پارٹی کا ادنیٰ کارکن بھی جمہوری طریقے سے پارٹی کی صوبائی و مرکزی تنظیموں اور آئینی اداروں کا عہدیدار اور ممبر بن سکتا ہے، اس موقع پر سید معمبر باچہ، ڈاکٹر عمر حیات خان، اشتر خان اور ضلعی الیکشن کمیشن کے چیئرمین سردار جہان خان سمیت پارٹی کے عہدیداروں اور کارکنوں نے کثیر تعداد میں شرکت کی۔