اسلام آباد(نمائندہ خصوصی)عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی سیکرٹری جنرل اور پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) کے ترجمان میاں افتخارحسین نے کہا ہے کہ انہیں کسی سے بھی حب الوطنی کے سرٹیفیکیٹس نہیں چاہیے، ان سے زیادہ وفادار پاکستان میں کوئی نہیں۔ اپوزیشن اتحاد کا مشترکہ فیصلہ ہے کہ موجودہ حکومت جعلی مینڈیٹ کے ساتھ آئی ہے اور ملک میں آزاد،شفاف اور بغیر کسی مداخلت کے انتخابات ہی مسائل کا واحد حل ہے۔

پی ڈی ایم کے سٹیئرنگ کمیٹی اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے میاں افتخارحسین نے کہا کہ پی ڈی ایم کے عہدیداروں میں ہر جماعت کو نمائندگی دی گئی ہے۔ اے این پی کے مرکزی سینئر نائب صدر امیرحیدر خان ہوتی پی ڈی ایم کے نائب صدر جبکہ مرکزی ترجمان زاہد خان ڈپٹی جنرل سیکرٹری منتخب کرلئے گئے ہیں۔انہوں نے کہا کہ میڈیا سے بھی گزارش کریں گے کہ اس تحریک کو چلانے کیلئے انکی مدد چاہیئے کیونکہ موجودہ حکومت کے دور میں جس طرح میڈیا کو نشانہ بنایا جارہا ہے ،شاید میڈیا والے اس طرح اپنی تکلیف کو بیان نہیں کرسکتے اسلئے جمہوری قوتوں کے ساتھ مل کر اپنے آپ کو اور اس ملک کو بچائیں۔

میاں افتخارحسین کا کہنا تھا کہ موجودہ حکومت جعلی مینڈیٹ کے ساتھ آئی ہے ۔ اپوزیشن 2018ء کے انتخابات کو نہیں مانتی اور مشترکہ مطالبہ یہی ہے کہ اس اسمبلی کو ختم کرکے نئے انتخابات کا اعلان کیا جائے۔انتخابات آزاد، شفاف اور بغیر کسی مداخلت کے ہو اور جس کسی کو بھی اکثریت ملے اقتدار انکے سپرد کیا جائے تاکہ پٹڑی سے اترا ہوا معاشی، جمہوری اور پارلیمانی نظام کو پٹڑی پر لایا جاسکے۔

انہوں نے مزید کہا کہ تمام قوتوں سے بھی کہتے ہیں کہ اپوزیشن کی آواز کو سنا جائے ، انہیں دیوار سے لگانے سے گریز کیا جائے، مقدمے نہ بنائے جائیں، اپوزیشن کے ساتھ مل بیٹھ کر اس ملک کے روشن مستقبل کے راستے کا تعین کرے۔ بیساکھیوں پر چلنے والے افراد سے چھٹکارا حاصل کیا جائے اور اس ملک کو حقیقی جمہوری نظام واپس دیا جائے۔