پشاور(پ ر) عوامی نیشنل پارٹی خیبرپختونخوا کے صدر ایمل ولی خان اور صوبائی جنرل سیکرٹری سردارحسین بابک کی جانب سے جاری ایک مشترکہ بیان میں کہا گیا ہے کہ حکومت پریس کانفرنسز کی بجائے عوام کو ریلیف فراہم کرنے کیلئے عملی اقدامات اٹھائے، اشیائے ضروریہ کی قیمتوں میں کمی لائی جائے تاکہ غریب عوام کو فائدہ پہنچایا جاسکے۔ باچاخان مرکز پشاور سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں بین الاقوامی سطح پر کمی آچکی ہے لیکن پاکستان میں ابھی تک کوئی کمی نہیں لائی گئی ہے۔ کورونا وائرس سے متاثرہ افراد کے ساتھ ساتھ عام افراد کو ریلیف کی فراہمی یقینی بنانے کیلئے اشیائے خوردونوش و ضروریہ کی قیمتوں میں کمی لائی جائے۔ انہوں نے کہا کہ ایمرجنسی بنیادوں پر چھوٹے بڑے ہسپتالوں میں سہولیات کی فراہمی یقینی بنائی جائے، حکومت متاثرہ افراد اور غریب مزدوروں کو راشن کی فراہمی کیلئے اقدامات اٹھائے، ضلعی انتظامیہ کے تعاون سے ہر یونین کونسل میں موجود ہسپتالوں کو کورونا ٹیسٹ کے کٹس فراہم کئے جائیں تاکہ مقامی سطح پر عوام کو ٹیسٹس کرانے میں کوئی دشواری پیش نہ آسکے۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ طبی آلات اور مواد کی فراہمی کو بھی یقینی بنائی جائے ، احتیاطی تدابیر کی آگاہی کیلئے اقدامات ناکافی ہیں۔ میڈیا کی مدد سے کورونا وائرس سے بچائو کیلئے 24گھنٹے پیغامات کا سلسلہ شروع کیا جائے تاکہ عوام کو بروقت اور درست آگاہی دی جاسکے۔ بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ حکومتی اقدامات غیراطمینان بخش ہیں، خودنمائی سے نکل کر عوام کی مدد پر توجہ مرکوز کرنی ہوگی۔ یہ تنقید نہیں بلکہ یاددہانی ہے کہ حکومت سنجیدگی کا مظاہرہ کرے اور عوام کو اصل ریلیف فراہم کی جائے۔اسکے ساتھ ساتھ صوبائی کابینہ کو بھی 24گھنٹے عوام کی خدمت کیلئے موجود ہونا چاہیے کیونکہ حالات مزید سنگینی کی جانب جارہے ہیں اور عوام کے جان و مال کا تحفظ حکومت وقت کی اولین ذمہ داری ہے