پشاور(پ ر) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی جنرل سیکرٹری سردارحسین بابک نے اعلان کیا ہے کہ خیبرپختونخوا کے اپنے ٹی وی ”اباسین ٹی وی” کے حوالے سے آئندہ اسمبلی اجلاس میں قرارداد پیش کی جائیگی۔

باچاخان مرکز پشاور میں اے این پی کی ذیلی تنظیم ”ملگری ہنرمندان” کے مشاورتی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے اے این پی خیبرپختونخوا کے جنرل سیکرٹری اور صوبائی اسمبلی میں پارلیمانی لیڈر سردارحسین بابک نے کہا کہ عوامی نیشنل پارٹی نے سر ہتھیلی پر رکھ کر اپنے ثقافت کا دفاع کیا ہے اور دفاع کرتے رہیں گے۔ باچاخان مرکز پشتونوں کا مشترکہ مرکز ہے اور ہر ہنر مند، ہر فنکار، اداکار اور فن سے وابستہ افراد کیلئے 24گھنٹے کھلا رہے گا۔ انہوں نے اعلان کیا کہ صوبہ بھر کے گلوکاروں اور فنکاروں کے اعزاز میں جلد تقاریب کا اہتمام کیا جائیگا جس میں حکومتی معاوضوں سے زیادہ معاوضے دیے جائیں گے۔ انہوں نے یہ بھی اعلان کیا کہ ”لوے بنڈار” کے نام سے پورے صوبے کے فنکاروں، اداکاروں اور تخلیقکاروں کے اعزاز میں ایک گرینڈ تقریب کا انعقاد جلد باچاخان مرکز پشاور میں کیا جائیگا۔

سردارحسین بابک نے کہا کہ تھیٹر، ڈرامے بھی کروائے جائیں گے کیونکہ موجودہ حکومت فن کی قدر سے بے خبر ہے اور ان سے کسی بھی چیز کی توقع نہ رکھی جائے۔ خیبرپختونخوا کیلئے فنکار برادری کے تعاون اور مشاورت سے کلچر پالیسی بھی جلد بنائی جائیگی۔ اے این پی ہر تخلیقکار، ہر فنکار اور فنون لطیفہ سے وابستہ ہر فرد کی جماعت ہے۔

انہوں نے کہا کہ سرکاری ٹی وی سے پشتون زبان کے پروگرام اور ڈرامے پرائم ٹائم سے نکال دیے گئے ہیں۔ یہ دراصل ان فنکاروں کو فن سے بدظن کرنے اور اپنی ثقافت سے دور کرنے کی ایک ساز ش ہے جسے عوامی نیشنل پارٹی ہر گز کامیاب نہیں ہونے دے گی۔

انہوں نے کہا کہ باچاخان ٹرسٹ کے زیرانتظام جلد پروڈکشن ہائوس کا افتتاح ہوگا جو صرف باچاخان ٹرسٹ یا عوامی نیشنل پارٹی نہیں بلکہ ہر فنکار کا مرکز ہوگا۔