پشاور(پ ر)خیبرپختونخوا کے سپیشل پولیس فورس کی مستقلی جلد از جلد کرانے کیلئے عوامی نیشنل پارٹی نے صوبائی اسمبلی میں تحریک التواء پیش کردی۔ شانگلہ سے منتخب رکن صوبائی اسمبلی فیصل زیب خان کی جانب سے جمع کردہ تحریک التواء میں سپیکر صوبائی اسمبلی سے درخواست کی گئی ہے کہ معمول کی کارروائی روک کر اس اہم مسئلے پر بحث کی اجازت دی جائے۔ تحریک التواء میں کہا گیا ہے کہ اس میں کوئی شک نہیں کہ دہشتگردی کے خلاف جنگ میں پولیس کے شانہ بشانہ سپیشل پولیس فورس کے جوانوں نے بھی تاریخی قربانیاں دی ہیں جس کی بدولت دہشتگردوں کو شکست ہوئی لیکن بدقسمتی سے کئی سال کا عرصہ گزرجانے کے باوجود یہ جوان مستقل نوکریوں سے محروم ہیں۔ سپیشل پولیس فورس کی مستقلی کے حوالے سے چند ماہ پہلے وزیراعلیٰ محمود خان بھی احکامات جاری کرچکے ہیں اور اسمبلی کے فلور پر ان کی مستقلی کا وعدہ بھی کیا لیکن تاحال ان کے احکامات پر عملدرآمد نہیں ہوا۔ تحریک التواء میں اس امر کی وضاحت طلب کی گئی ہے کہ وزیراعلیٰ کے احکامات پر کیوں عملدرآمد نہیں ہوا۔متن کے مطابق معزز ایوان کے وساطت سے وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا سے درخواست کی گئی ہے کہ سپیشل فورس کے جوانوں کو جلدازجلد مستقل کیا جائے اور انکو مزید ذہنی دبائو کا شکار نہ بنایا جائے۔