پشاور ( پ ر) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی صدر ایمل ولی خان نے پختون سٹوڈنٹس فیڈریشن کے مرکزی چیئرمین آرگنائزنگ کمیٹی حق نواز خٹک ، مرکزی جنرل سیکرٹری عمران مومند اور پشاور یونیورسٹی کے جنرل سیکرٹری حسنین علی کو شوکاز نوٹسز جاری کردیے۔پی ایس ایف کے تینوں عہدیداروں نے 27جنوری کو باچاخان مرکز پشاور میں ہلڑبازی،غل غپاڑہ اور انتہائی ہتک آمیز رویہ اپنانے اور باچاخان مرکز میں توڑ پھوڑ کے ساتھ ساتھ پارٹی عہدیداروں کے ساتھ تذلیل آمیز و ہتک آمیز رویہ اپنایا اور انکے لئے توہین آمیز الفاظ کا استعمال کیا۔ اسی کی پاداش میں انہیں تین دن کے اندر تحریری وضاحت جمع کرنے کی ہدایت کی گئی ہے، بصورت دیگر انکے خلاف سخت تادیبی کارروائی عمل میں لائی جائیگی۔ اے این پی کے صوبائی صدر ایمل ولی خان کا کہنا ہے کہ پارٹی اور تمام دیگر ذیلی تنظیموں اور انکے اراکین نظم و ضبط اور احترام کے مضبوط رشتے کو کمزور کرنے کی کسی صورت اجازت نہیں دی جائیگی اور ایسا رویہ ناقابل برداشت ہے۔کسی بھی عہدیدار کی جانب سے ذلت آمیز رویہ اپنانا ناقابل برداشت ہے،احترام کا رشتہ قائم رکھنا ہوگا،بصورت دیگر پارٹی سخت ایکشن لینے میں کوئی تحمل نہیں دکھائے گی۔