پشاور( پ ر) عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی جنرل سیکرٹری میاں افتخارحسین نے بارشوں اور برفباری کے بعد پورے ملک میں بالعموم اور خیبرپختونخوا میں بالخصوص متاثرہ افراد کے فوری امداد کیلئے حکومت اور مخیر حضرات سے اپیل کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس بار ملک بھر میں ریکارڈ برفباری اور بارشوں کی وجہ سے غریب افراد بڑی تعداد میں متاثر ہوئے ہیں اور کئی خاندانوں کے پیارے چھتوں اور برفانی تودوں کے گرنے سے جاں بحق ہوچکے ہیں۔قدرتی آفات سے بچنا ناممکن لیکن ان آفات سے بچنے کیلئے حفاظتی اقدامات اٹھانا اور متاثرین کے نقصانات کا ازالہ اولین ترجیح ہونی چاہیئے۔نوشہرہ کے گائوں خوش مقام میں ایک متاثرہ خاندان سے تعزیت کے موقع پر گفتگو کرتے ہوئے میاں افتخارحسین نے کہا کہ یہ ایک خاندان پورے ملک اور خیبرپختونخوا میں متاثرہ افراد کی تصویر پیش کررہی ہے۔ خوش مقام کے بدقسمت خاندان نے بارشوں کی وجہ سے چھت گرنے کے واقعے میں اپنا اکلوتا بیٹا کھو دیا جبکہ دیگر چار افراد زخمی حالت میں زیرعلاج ہیں۔ متاثرہ خاندان بولنے اور سماعت کی قوت سے بھی محروم ہیں جبکہ ان کا پورا گھر گرنے کے قریب ہے،انہوں نے حکومت اور مخیر حضرات سے متاثرہ خاندان سمیت ملک بھر میں ان قدرتی آفات سے متاثرہ افراد کی مالی مدد کی اپیل کرتے ہوئے کہا کہ ان قدرتی آفات سے متاثرہ خاندان فوری و ہنگامی امداد کے منتظر ہیں۔نوشہرہ خوش مقام کا متاثرہ خاندان خصوصی افراد ہیں جو شاید کسی کو اپنی مصیبت بیان نہیں کرسکتے اسلئے وہ زیادہ توجہ کے مستحق ہیں۔ملاقات کے وقت بچے کا والد عبدالغفار مجھ سے لپٹ کر رورہا تھا لیکن قوت گویائی سے محرومی کی وجہ سے وہ آنسو بہانے اور بلند آواز سے اپنے دکھ درد کا اظہار کررہا تھا جو انتہائی تکلیف دہ لمحات تھے۔ میاں افتخارحسین نے ایک بار پھر تمام مخیر حضرات،انتظامیہ اور حکومت سے متاثرہ خاندان کی دادرسی اور تمام صوبے و ملک بھر میں ایسے غریب لوگوں کی مدد کی اپیل کی۔