پشاور( پ ر) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی صدر ایمل ولی خان نے کہا ہے کہ پارٹی کے نوجوان رہنما اور نیشنل یوتھ آرگنائزیشن کے صوبائی جنرل سیکرٹری شیراللہ وزیر کے گھرپر رات کے اندھیرے میں نامعلوم افراد کا حملہ انتہائی افسوسناک اور تکلیف دہ ہے۔حملہ آوروں کی فوری گرفتاری کا مطالبہ کرتے ہوئے ایمل ولی خان نے کہا کہ سیکیورٹی فورسز کے حصار میں نامعلوم افراد کس طرح گھروں پر حملہ آور ہورہے ہیں۔ حکومت شہریوں کی جان و مال کو تحفظ دینے بری طرح ناکام ہوچکی ہے اور دہشت و وحشت پھیلانے والے دھندناتے پھررہے ہیں۔ وزیرستان میں ایک طرف عام شہریوں سے اپنے تحفظ کو یقینی بنانے کیلئے تمام اسلحہ اکھٹا کردیا گیا ہے تو دوسری جانب دہشت گردوں اور ٹارگٹ کلرز کو کھلی چھوٹ دے دی گئی ہے۔ ایمل ولی خان نے کہا کہ پختون بیلٹ میں کسی کو تحفظ حاصل نہیں، حکومت خاموشی سے پختونوں پر حملوں اور انہیں دہشت کا نشانہ بنانے کا تماشہ دیکھ رہے ہیں۔ پختونوں کے گھربارکو مسمار کرنے ،انہیں لوٹنے کے باوجودبھی ہر طرف سیکیورٹی فورسزکی موجودگی میں کس طرح حملے ہورہے ہیں۔ حکومت کو معصوم پختونوں کے جانوں کے ساتھ کھیلنے والوں سے نمٹنا ہوگا، ورنہ اس کے بھیانک نتائج سامنے آئیں گے۔