2019 September PK-22 کے روڈز ٹوٹ پھوٹ کا شکار،خیبرپختونخوا اسمبلی میں توجہ دلاؤ نوٹس جمع

PK-22 کے روڈز ٹوٹ پھوٹ کا شکار،خیبرپختونخوا اسمبلی میں توجہ دلاؤ نوٹس جمع

PK-22 کے روڈز ٹوٹ پھوٹ کا شکار،خیبرپختونخوا اسمبلی میں توجہ دلاؤ نوٹس جمع

پشاور(نیوز رپورٹر) اے این پی کے پارلیمانی لیڈر سردار حسین بابک نے پی کے 22 بونیر کے روڈز کی خستہ حالی بارے خیبرپختونخوا اسمبلی میں توجہ دلائو نوٹس جمع کرایا ہے۔ نوٹس میں کہا گیا ہے کہ پی کے22 کے روڈز کھنڈرات کا منظر پیش کر رہے ہیں جن کا کوئی پرسان حال نہیں۔سلیم خان شاخ سے ڈھنڈار، سروائی، روڈامبیلا بازار سے نگرئی بازار علاقہ امازئی کے تمام روڈز کی صورتحال ابتر ہو چکی ہے اسی طرح تحصیل خدوخیل اور تحصیل منڈنڑ کے جملہ روڈز بھی خراب حالت کی وجہ سے ناقابل استعمال ہو چکے ہیں۔ اس حلقے سے سالانہ کروڑوں روپے کی آمدن تمباکو، معدنیات، جنگلا، فصلوں اور سبزیوں کی شکل میں حکومت کی آمدن کا ذریعہ بن رہی ہے جبکہ اسی علاقہ کے ہزاروں کی تعداد میں افرادی قوت باہر دنیا میں سالانہ اربوں روپیہ حکومت کے زرمبادلہ کا ذریعہ ہے۔ نوٹس میں مزید کہا گیا ہے کہ حکومت اس علاقے کے روڈز کی تعمیر کیلئے ہنگامی بنیادوں پر فنڈز ریلیز کرے تاکہ علاقہ ترقی کی راہ پر گامزن ہو۔ نوٹس کے مطابق علاقہ عوام مختلف مقامات پر اپنی مدد آپ کے تحت کچے روزڈز بنانے اور پختگی میں مصروف ہیں۔اس دور جدید میں بھی روڈز کی خستہ حالی موجودہ حکومت کیلئے لمحہ فکریہ ہے۔ شکست و ریخت کا شکار ان روڈز پر ہزاروں مریضوں کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے ۔موجودہ حکومت علاقے کی سڑکوں کی خستہ حالی اور ٹوٹ پھوٹ پر توجہ دے کر نئے روزڈ کی تعمیر کیلئے جلد فنڈز ریلیز کرے۔

شیئر کریں