پشاور( نیوزرپورٹر) عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی جنرل سیکرٹری میاں افتخارحسین نے یوم شہدائے پولیس کے موقع پر پولیس فورس کو خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے کہا ہے کہ پختونخوا پولیس کا قربانیوں کے حوالے سے کردار منفرد اور مثالی ہے۔جنہوں نے اپنی جانوں کی پرواہ نہ کرتے ہوئے اس قوم کے لئے نذرانہ پیش کرتے ہوئے امن قائم کیا اور اس کی ایک مثال ہیڈکانسٹیبل ریاضہے جنہوں نے پریس کلب پر خودکش حملے کے دوران خودکش بمبار کو آگے جانے نہیں دیا، جان کی قربانی دی لیکن پریس کلب اور وہاں پر بیٹھے ہوئے صحافیوں کی جان بچائی،قربانی کا یہ جذبہ شاید ہی کہیں اور نظر آئیگا۔میاں افتخارحسین کا کہنا تھا کہ دہشتگردی کے دوران پولیس پر بے تحاشا حملے ہوئے،ان کے ساتھیوں کو ذبح کیا گیا،دہشتگردوں نے جب پشار پر لشکرکشی کی تو پولیس نے ان کو ناکام بنایا ۔ایس پی خورشیدکو دہشتگردوں نے گھیرے میں لے کر اس کا سر تن سے جدا کیا گیا۔تین دن تک ہم صرف اس انتظار میں تھے کہ اس کا سر مل سکے اور تدفین ہوسکے۔دہشتگردوں کی جانب سے پولیس کو کئی بار نشانہ بنایا گیا لیکن انہوں نے اپنے مقصد سے کبھی روگردانی نہیں کی اور آج اس کا ثمر پورے صوبے بالخصوص اور پورے ملک کو بالعموم مل رہا ہے۔انہوں نے مزید کہا کہ اے این پی کی دورحکومت میں پولیس فورس کے مراعات میں خصوصی اضافہ کیا گیا اور پولیس اپ گریڈیشن اے این پی ہی کا کارنامہ ہے، پولیس فورس کی تنخواہ تین گناہ بڑھائی گئی، شہداء پیکج کو تین لاکھ سے بڑھا کر 30لاکھ کیا گیا۔ اس کے ساتھ ساتھ اے این پی دورحکومت میںشہید پولیس کے خاندان کو سن کوٹہ، پولیس کے بچوں کی مفت تعلیم اور پلاٹ الاٹمنٹ یا اس کے برابر مالی امداد دی جائیگی۔میاں افتخارحسین کا کہنا تھا کہ ان کی حکومت نے پولیس کی ٹریننگ صلاحیت کو بڑھایا تاکہ دہشتگردوں کے حملوں کو پسپا کیاجاسکے۔پولیس فورس کے ہزاروںاہلکاروں کی قربانیاں دی جنہیں کبھی بھی بھلایا نہیں جاسکتا۔ آج یوم شہداء کے موقع پر ہم پولیس کے تمام شہداء کو خراج تحسین پیش کرتے ہیںجنکی قربانیوں کے سبب آج پوری قوم سکھ او چین کی نیند سورہی ہے۔ میاں افتخارحسین نے یوم شہداء کے موقع پر تقریب میں شرکت کی دعوت پر شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ وہ پولیس فورس کے قربانیوں کے معترف ہیں لیکن وہاںبدمزگی سے بچنے کے لئے وہ اس پروقار تقریب میں شرکت نہیں کرسکیں گے۔ ان کا کہنا تھا کہ جن لوگوں نے پولیس کے قاتلوں کو دفتر دینے کی پیشکش کی، آج اس بڑے دن پر ان کے درمیان بیٹھ کر بدمزگی پیدا نہیں کرنا چاہتا۔ انہوں نے تمام پولیس فورس کو یوم شہداء کے موقع پران کی قربانیوں پر سلام پیش کرتے ہوئے پارٹی کی جانب سے ہر ممکن تعاون اور حوصلہ افزائی کا یقین دلایا۔