عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی صدر ایمل ولی خان نے چارسدہ عمرزئی میں پیش آنے والے درد ناک واقعے پر مثالی پولیس کی کارکردگی پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ پولیس کی جانب سے متضاد بیانات سے معاملے کو مزید پیچیدہ کیا جا رہا ہے، اور ایسے بیانات انصاف کی راہ میں رکاوٹ بن رہے ہیں، اپنے ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ رمضان المبارک کے مقدس ماہ میں تین بے گناہ بھائیوں کا قتل ظلم کی انتہا ہے،جبکہ واقعے کے بعد حکومتی ترجمان اور پولیس ایک پیج پر متفق نہیں ہیں، انہوں نے کہا کہ بادی النظر میں متضاد بیانات ملزموں کو تحفظ فراہم کرنے کیلئے دیئے جا رہے ہیں اور انصاف کی فراہمی میں رکاوٹ ڈال کر متاثرہ خاندان کو زچ کیا جا رہا ہے،انہوں نے کہا کہ صوبائی ترجمان ملزموں کے پاکستان میں ہونے اور پولیس ملائشیا فرار ہونے کا دعوی کر رہی ہے،ایمل ولی خان نے کہا کہ مجرم کتنا بھی با اثر ہو قانون سے بالاتر نہیں ہو سکتا، اے این پی انصاف کی فراہمی تک ظلم کا شکار متاثرہ خاندان کے شانہ بشانہ کھڑی ہے،انہوں نے مطالبہ کیا کہ سفاک قاتلوں کو جلد از جلد گرفتار کر کے کیفر کردار تک پہنچایا جائے تاکہ مستقبل میں ایسے واقعات سے بچا جا سکے،انہوں نے کہا کہ گرفتاری کے عمل میں حکومت اور پولیس نے اپنی روش نہ بدلی تو اے این پی واقعے کو صوبائی اسمبلی سمیت ہر فورم پر اٹھائے گی اور غمزدہ خاندان کو انصاف ملنے تک ان کے ساتھ رہے گی، انہوں نے کہا کہ اے این پی دنیا کے کسی بھی کونے میں ہونے والے ظلم کے خلاف کھڑی ہوگی۔