پشاور (پ ر) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی صدر ایمل ولی خان نے الیکشن کمیشن کی جانب سے اپنے خط کے موصول ہونے والے جواب پر انتہائی نا پسندیدگی اور عدم اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ اے این پی کا مؤقف اس حوالے سے واضح ہے کہ قبائلی اضلاع کے انتخابات میں سیکورٹی فورسز بشمول فوج کے سپاہیوں کی پولنگ سٹیشنوں کے اندر موجودگی بہت سے سوالات کو جنم دے گی اور 25جولائی کے انتخابات میں اس کے اثرات پوری قوم دیکھ چکی ہے، انہوں نے کہا کہ اہلکاروں کی پولنگ سٹیشنوں کے اندر موجودگی تصادم کو دعوت دینے کے مترادف ہے،اس سے اجتناب ہونا چاہے ا، انہوں نے کہا کہ مقصد اگر امن و امان کی صورتحال ٹھیک کرنی مقصود ہے تو سیکورٹی فورسز کو باہر رکھنا ہو گا،انہوں نے کہا کہ الیکشن کمیشن کے اس عمل سے امیدوار اور ووٹر کا اعتماد ختم ہو جائے گا،اور امن و امان کا شدید مسئلہ پیدا ہو گا،ایمل ولی خان نیکہا کہ ہم اپنا مینڈیٹ کسی صورت چوری نہیں ہونے دیں گے، انہوں نے تمام پارٹی کارکنوں سے کہا کہ انتخابات کیلئے تیار رہیں،اور اپنے مینڈیٹ کی حفاظت کرین، انہوں نے کہا کہ سیکورٹی اہلکاروں کو کسی صورت پولنگ سٹیشنوں کے اندر گھسنے نہیں دیں گے۔ انتخابی عمل پر اثر انداز ہو گی، ایمل خان نے کہا کہ اے این پی نے الیکشن کمیشن کے نام خط میں درخواست کی تھی کہ پولنگ سٹیشن کے اندر الیکشن کمیشن کے با اختیار عملے کو انتہائی صاف،شفاف اور غیر جانبدارانہ انتخابات کے انعقاد کیلئے پر امن ماحول فراہم ہونا چاہئے جبکہ سیکورٹی اہلکاروں بشمول فوجیوں کی پولنگ سٹیشنوں کے اندر موجودگی سے نہ صر ف اس ادارے پر انگلیاں اٹھتی ہیں بلکہ امیدوار اور ووٹر دونوں ہی اپنی رائے کو غیر محفوظ تصور کرتے ہیں، انہوں نے کہ ہم الیکشن کمیشن کے جواب سے مطمئن نہیں ہیں،اگر الیکشن کمیشن خود ہی سیکورٹی اہلکاروں کو پولنگ سٹیشنوں میں تعینات کرنے کا حامی ہے تو پھر سیاسی جماعتوں کو کیا پیغام دیا جا رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ 25جولائی کے انتخابات کے حوالے سے ایک ادارے کے خلاف جو الزامات لگے وہ ملکی سلامتی کیلئے مناسب نہیں ہیں، انہوں نے کہا کہ الیکشن کمیشن اپنے فیصلے پر نظر ثانی کرتے ہوئے سیکورٹی اہلکاروں و فوجی جوانوں کی ڈیوٹیاں پولنگ سٹیشن کی چاردیواری کے باہر لگائے،انہوں نے کہا کہ تمام سیاسی جماعتوں کو یکساں مقابلے کا یکساں مقابلے کا ماحول فراہم کیا جانا چاہئے تاکہ ووٹرز آزادانہ طور پر اپنا حق رائے دہی استعمال کر سکیں اور حکومتی مشینری ریاستی ادارے اور سیکورٹی فورس کے اہلکار انتخابی عمل کے دوران حمایت یا مخالفت میں اثر انداز نہ ہوں،یہی ملک قوم کی بہتری کی علامت ہے۔