پشاور(پ ر)عوامی نیشنل پارٹی کی صوبائی نائب صدر شازیہ اورنگزیب خان نے کہا ہے کہ قبائلی اضلاع کے انتخابات میں اس بار کوئی بھی اے این پی کا مینڈیٹ چوری نہیں کرسکتا،2 جولائی کو ہونے والے انتخابات کے حوالے سے اے این پی نے خواتین کی ٹیمیں تشکیل دے دی ہیں جو پورے قبائلی اضلاع میں الیکشن مہم کے دوران کمپیئن اور الیکشن عمل میں حصہ لیں گی۔باچا خان مرکز پشاور میں خواتین رہنماؤں کے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے شازیہ اورنگزیب نے کہا کہ الیکشن مہم کیلئے خواتین پولنگ ایجنٹس کو باضابطہ ٹریننگ دی جائیگی اور الیکشن عمل کیلئے جو خصوصی ٹیمیں تشکیل دی گئی اُن کی مکمل حوصلہ افزائی اور تربیت کی جائیگی،اسی طرح شفاف اور پرامن انتخابات کے انعقاد کیلئے بھی اے این پی کی جانب سے خصوصی ٹیمیں تشکیل دی گئی ہیں جو الیکشن کے روز تک پارٹی ورکروں کے شانہ بشانہ الیکشن عمل کی کامیابی کیلئے کوشاں رہیں گے،شازیہ اورنگزیب نے کہا کہ پچھلے الیکشن میں اے این پی کا مینڈیٹ چوری کیا گیا تھا،اس بار اے این پی کسی کو یہ موقع فراہم نہیں کریگی،انہوں نے تمام پارٹی ورکروں پر زور دیا کہ پوری لگن اور محنت کے ساتھ الیکشن عمل میں حصہ لیں، کامیابی اس الیکشن میں اے این پی کی ہی ہوگی کیونکہ موجودہ وفاقی و صوبائی حکومتوں سے عوام متنفر ہوچکی ہیں۔اجلاس میں ایم پی اے شاہدہ،نائب صدر ضلع مردان سیدہ نازیہ شاہ،نائب صدر ضلع صوابی ڈاکٹر تسلیم بی بی،روزینہ بی بی،سعدیہ بی بی،صفیہ اسرار،زیبا آفریدی،جنرل سیٹ پر قبائلی انتخابات کیلئے اے این پی کی نامزد امیدوار ناہید آفریدی،ڈسٹرکٹ ممبرمہرین کامران اور سابقہ ایم پی اے منور سلطانہ نے بھی شرکت کی۔