پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی جنرل سیکرٹری میاں افتخار حسین نے کہا ہے کہ اسٹیبلشمنٹ نے تمام سیاسی جماعتوں کے خلاف سازش کر کے عمران کو اقتدار دیا اور ملک کی بقا کو داؤ پر لگا دیا،ان خیالات کا اظہار انہوں نے صوابی پنج پیر میں ایک شمولیتی جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے کیا ، انہوں نے کہا کہ اسٹیبلشمنٹ کے پاس عمران خان کی صورت میں آخری کارتوس تھاجسے آزما لیا گیا لیکن وہ بھی نہ چل سکا ،انہوں نے کہا کہ آصف زرداری نے طبل جنگ بجا دیا ہے،حکومت کسی صورت نہیں چل سکتی جبکہ آرمی چیف روزانہ کی بنیاد پر کٹھ پتلی وزیر اعظم کو ڈکٹیشن دے رہے ہیں ،انہوں نے کہا کہ وفای کابینہ کے اندر بھی اختلافات ہیں اور وزراء دو گروپوں میں تقسیم ہو چکے ہیں ،میاں افتخار حسین نے کہا کہ پشاور میں دو سال سے بی آر ٹی پر کام جاری ہے لیکن کرپشن کیلئے شروع کیاجانے والا منصوبہ عوام کیلئے وبال جان بن گیا ،نا اہل پرویز خٹک نے مال بنانے کیلئے پشاور کا بیڑہ غرق کر دیا ، انہوں نے کہا کہ صرف کرپشن کی خاطر بی آر ٹی کا ٹھیکہ ایک بلیک لسٹ کمپنی کو دیا گیا،اے این پی اقتدار میں آ کر لوٹی گئی دولت کا حساب لے گی،انٹرا پارٹی الیکشن کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ اے این پی میں دیگر جماعتوں کی طرح نامزدگیاں نہیں ہوتیں بلکہ جمہوری انتخابی عمل کے ذریعے کارکن اپنے نمائندوں کا انتخاب کرتے ہیں انہوں نے کہا کہ اسفندیار ولی خان کی قیادت میں تنظیم سازی کا عمل جلد مکمل ہونے لگا ہے۔