2019 بارہ سال پہلے جمہوریت دشمن قوتوں نے انسانیت کا قتل عام کیا تھا،اسفندیارولی خان

بارہ سال پہلے جمہوریت دشمن قوتوں نے انسانیت کا قتل عام کیا تھا،اسفندیارولی خان

بارہ سال پہلے جمہوریت دشمن قوتوں نے انسانیت کا قتل عام کیا تھا،اسفندیارولی خان

پشاور( پ ر) عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی صدر اسفندیارولی خان نے کہا ہے کہ 12سال پہلے کراچی کے مرکزی شاہراہ فیصل پر کارساز کے مقام پر جمہوریت دشمنوں نے جس طرح خون کی ہولی کھیلی وہ پاکستان کی تاریخ کا ایک ساہ ترین باب ہے لیکن بدقسمتی سے ابھی تک اس واقعے میں ملوث افراد کو کیفر کردار تک نہیں پہنچایا گیا، سانحہ کارساز کے قاتلوں کی عدم گرفتاری اس ملک کے ذمہ داروںکی کارکردگی پر ایک سوالیہ نشان ہے۔ سانحہ کارساز کی12ویں برسی پر جاری پیغام میں سربراہ اے این پی کا کہنا تھا کہ بارہ سال پہلے جمہوریت دشمن قوتوں نے انسانیت کا قتل عام کیا تھا،انہی قوتوں کی وجہ سے پاکستان کئی برسوں سے آگ میں جل رہا ہے۔اس واقعے میں شہید صرف ایک پارٹی نہیں بلکہ جمہوریت کے شہداء ہیں۔جب تک ان جیسے واقعات میں ملوث افراد کو کیفرکردار تک نہیں پہنچایا جاتا،تب تک امن صرف ایک خواب ہی رہے گا،اے این پی جمہوریت کیلئے جانیں نچاور کرنیوالوں کو خراج تحسین پیش کرتی ہیں۔عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی صدر اسفندیارولی خان نے کہا کہ ملک میں جمہوریت کو پنپنے کا موقع دینا ہی اس ملک کی بقا ہے، موجودہ حالات ایک بار پھر جمہوری قوتوں کیلئے ایک چیلنج بن چکا ہے اور سیاسی جماعتوں کو متفقہ طور پر مشترکہ لائحہ عمل کے ساتھ آگے آناہوگا تب ہی ملک میں جمہوریت اصل شکل میں بحال ہوگی۔ جمہوریت مخالف قوتیں آج بھی کوشش کررہے ہیں کہ اٹھارویں ترمیم کے خلاف سازش کرکے صوبائی حقوق پر ڈاکہ ڈالیں لیکن ہم انہیں متنبہ کرتے ہیں کہ اس طرح کی کسی بھی کوشش کو ہم کامیاب نہیں ہونے دیں گے اور مذمت سے مزاحمت تک کا راستہ اپنائیں گے

شیئر کریں