2019 April صورتحال تشویشناک ہے ،حکومتی وزراء کالعدم تنظیموں کو سپورٹ کر رہے ہیں ، میاں افتخار حسین

صورتحال تشویشناک ہے ،حکومتی وزراء کالعدم تنظیموں کو سپورٹ کر رہے ہیں ، میاں افتخار حسین

صورتحال تشویشناک ہے ،حکومتی وزراء کالعدم تنظیموں کو سپورٹ کر رہے ہیں ، میاں افتخار حسین

عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی جنرل سیکرٹری میاں افتخار حسین نے کہا ہے کہ ھکومت کے بیشتر وزراء دہشت گردوں کے ساتھی ہیں اور کالعدم تنظیموں کو سپورت کر رہے ہیں، دہشت گردی کے خلاف قربانیاں دینے والوں کو فراموش کرنے کی پالیسی جاری ہے ، ان خیالات کا اظہار انہوں نے ایگریکلچر کالج کوئٹہ میں پختون ایس ایف کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا،اس موقع پر انہوں نے کہا کہ نوجوان نسل ہمارا مستقبل ہے اور ملک کی ترقی کیلئے طلبا کا تعلیم یافتہ ہونا ضروری ہے ، انہوں نے کہا کہ سیاسی سرگرمیوں میں حصہ لینا طلبا کا بنیادی حق ہے تاہم انہیں اپنی تعلیم پر بھرپور توجہ مرکوز کرنے کی ضرورت ہے، میاں افتخار حسین نے کہا کہ ہم باچا خان کے قافلے کے سپاہی ہیں اور باچا خان نے قوم کو تعلیم دینے کیلئے جیلوں کی صعوبتیں برداشت کی ہیں، انہوں نے طلباء پر زور دیا کہ با مقصد نظریہ بہترین رہنمائی کا ضامن ہے ،سیاسی صورتحال کا ذکر کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ہم نے جس انداز میں دہشت گردی کا مقابلہ کیا وہ تاریخ کا انمٹ باب ہے، پولیس کا اعتماد بحال کرنے کا سہرا اے این پی کے سر ہے لیکن بدقسمتی سے آج کے حکمران دہشتگردی کو اپنی ذمہ داری قبول کرنے سے کتراتے ہیں اور پولیس کو تن تنہا میدان میں چھور کر خود دہشتگردوں سے ملے ہوئے ہیں، میاں افتخار حسین نے کہا کہ حکومت کے بعض وزراء کالعدم تنظیموں اور دہشت گردوں کو سپورت کر رہے ہیں،جبکہ دہشت گردوں کو کھلی چھٹی دے دی گئی ہے، انہوں نے کہا کہ اے این پی نے اپنے دور حکومت میں جہاد کیا اور قوم کو اس ناسور سے بچانے کیلئے اے این پی کے رہنماؤں نے قربانیاں دیں،انہوں نے کہا کہ ہم نے طالبان سے مذاکرات کئے لیکن ان کی جانب سے کاروائیاں بند نہ ہونے پر آپریشن کیا گیا جس کی وجہ سے آج سوات میں امن قائم ہے،انہوں نے کہا کہ دہشت گردی کے خاتمے کیلئے حکومتوں کو اے این پی سے سیکھنا ہو گا ، میاں افتخار نے کہا کہ جمہوریت ملک کیلئے انتہائی اہم ہے اور ہم مارشل لا یا سول مارشل لا کی مخالفت کرتے رہیں گے، انہوں نے کہا کہ پاکستان ہمارا ملک ہے اور اس کی ترقی کیلئے ہم نے کردار ادا کرنا ہے،جمہوریت کی بقا آج خطرے میں ہے موجودہ ھکمرانوں نے ملک کی ترقی و جمہوریت کی بالادستی کو داؤ پر لگا دیا ہے،انہوں نے کہا کہ حکومتوں نے صرف ڈالروں کے عوض پالیسیاں بنائیں جو اس ملک کیلئے زہر قاتل تھیں ، انہوں نے کہا کہ ہم نے قوم کے مفاد میں پالیسیاں وضع کرنی ہیں،انہوں نے کہا کہ میرا بیٹا دہشت گردوں نے شہید کیا لیکن میرے ارادے کمزور نہیں ہوئے اور راشد شہید فاؤنڈیشن کے زیر انتظام میں بچوں کی خدمت میں مصروف ہوں۔

شیئر کریں