حکومت پری بجٹ اجلاس طلب کر ے ، آئندہ بجٹ پر اسمبلی کو آگاہ کیا جائے سردار حسین بابک
صوبے کی مالی حالت اور عوام کیلئے رکھے گئے منصوبوں کے حوالے سے ممبران اسمبلی کو اعتماد میں لیا جائے
خیبر پختونخوا مالی طور پر دیوالیہ ہو چکا ہے ، معاملات چلانے کیلئے کیا اقدامات کئے جائیں گے۔

صوبے کو ملنے والی بیرونی امداد ، مرکز سے ملنے والا حصہ اور معاشی صورتحال عوام کے سامنے رکھنا ہو گی۔
بجٹ پاس کرانے کیلئے اس پر بحث لازم ہے ،حکومت کی تشکیل کے ایک ماہ بعد بھی سٹینڈنگ کمیٹیاں نہیں بنائی جا سکیں۔
پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی جنرل سیکرٹری سردار حسین بابک نے کہا ہے کہ صوبائی حکومت پری بجٹ اجلاس طلب کر کے اسمبلی کو صوبے کی مالی حالت اور آئندہ بجٹ کے حوالے سے تفصیلاً آگاہ کرے ، اپنے ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ صوبائی حکومت صوبے کی مالی حالت اور عوام کیلئے رکھے گئے منصوبوں سے ارکان اسمبلی کو آگاہ کرے اور آئندہ بجٹ کے حوالے سے ممبران اسمبلی کو اعتماد میں لیا جائے ، انہوں نے کہا کہ جو بجٹ اسمبلی سے پاس کرایا جائے گا اسے اسمبلی میں پیش کرنا اور اس پر بحث لازم ہے ، انہوں نے کہا کہ خیبر پختونخوا مالی طور پر دیوالیہ ہو چکا ہے لہٰذا صوبے کو ملنے والی بیرونی امداد ، مرکز سے ملنے والا حصہ اور صوبے کی معاشی صورتحال عوام کے سامنے رکھنا ہو گی،سردار بابک نے کہا کہ قوم کو آگاہ کیا جائے کہ صوبے کے مالی معاملات چلانے کیلئے کیا اقدامات کئے جا رہے ہیں،انہوں نے کہا کہ حکومت بنے ایک ماہ گزر چکا ہے لیکن تاحال سٹینڈنگ کمیٹیاں نہیں بنائی گئیں،حکومت فوری طور پر اجلاس بلائے تاکہ بجٹ سمیت تمام اہم معاملات پر بحث کی جائے،