میاں افتخار حسین کا گل زمین خان کے انتقال پر اظہار افسوس
مرحوم زمانہ طالبعلی سے نظریاتی کارکن کے ساتھ ساتھ انتہائی کہنہ مشق اور تجربہ کار سیاسی رہنما تھے۔
گل زمین خان پاکستان و بیرون ملک اے این پی کیلئے مثبت اور فعال کردار ادا کرتے رہے۔
وطن دوست سوچ رکھنے والے گل زمین خان اپنی مٹی سے محبت رکھتے تھے۔
گل زمین خان کی تاریخی خدمات کو تاریخ میں سنہرے حروف سے لکھا جائے گا۔

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی جنرل سیکرٹری میاں افتخار حسین نے اے این پی سعودی عرب کے صدر گل زمین خان کی وفات پر دکھ اور افسوس کا اظہار کرتے ہوئے مرحوم کی مغفرت کیلئے دعا کی ہے، اپنے ایک تعزیتی بیان میں انہوں نے کہا کہ مرحوم گل زمین خان زمانہ طالبعلمی سے ہی میرے سیاسی رفیق تھے اورجب میں پختون ایس ایف کا صوبائی صدر بنا تو گل زمین مرحوم تیمر گرہ کالج میں پختون ایس ایف کے انتہائی سرگرم کارکن تھے ،بعد ازاں وہ اپنی کوششوں اور فعال سرگرمیوں کے باعث خود بھی صوبائی صدارت کے عہدے تک پہنچے ، میاں افتخار حسین نے کہا کہ گل زمین خان نظریاتی کارکن کے ساتھ ساتھ انتہائی کہنہ مشق اور تجربہ کار سیاسی رہنما تھے اور پاکستان و بیرون ملک اے این پی کیلئے مثبت اور فعال کردار ادا کرتے رہے ،انہوں نے مرحوم کی جدوجہد اور سیاسی خدمات کو خراج عقیدت پیش کیا اور کہا کہ ایسے نظریاتی سیاسی رہنما بہت کم پیدا ہوتے ہیں ، وطن دوست سوچ رکھنے والے گل زمین خان اپنی مٹی سے محبت رکھتے تھے ،انہوں نے مرحوم کی مغفرت اور لواحقین کے صبر جمیل کیلئے بھی دعا کی۔
میاں افتخار حسین نے کہا کہ گل زمین خان کی وفات میرے لئے درد اور رنج کا باعث ہے ان کے انتقال سے میں اپنے بہت قریبی ساتھی سے محروم ہو گیا ہوں ، انہوں نے پسماندگان سے ہمدردی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ موت برحق ہے اوراس سے چھٹکارا ممکن نہیں،انہوں نے مرحوم کی گرانقدر خدمات کو خراج عقیدت پیش کیا اورکہا کہ گل زمین خان کی تاریخی خدمات ناقابل فراموش ہیں اور انہیں تاریخ میں سنہرے حروف سے لکھا جائے گا، انہوں نے مرحوم کی مغفرت اور پسماندگان کے صبر جمیل کیلئے بھی دعا کی۔