اسمبلی کی آئینی مدت کی تکمیل جمہوریت کی فتح ہے ، سردار حسین بابک
اے این پی جمہوریت کی مضبوطی اور عوام کی حکمرانی یقینی بنانے کیلئے جدوجہد پر یقین رکھتی ہے۔
جمہوریت ہی تمام مشکلات اور مسائل کا حل ہے ۔
اسمبلی میں قلیل تعداد کے باوجود مؤثر انداز میں صوبے کے مسائل کا مقدمہ لڑا ۔
حکومتوں کا دورانیہ پورا کرنا جمہوری اداروں کے استحکام اور مضبوطی کی جانب اہم پیش رفت ہے۔

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی جنرل سیکرٹری سردار حسین بابک نے اسمبلی کی مدت معیاد پوری کرنے کو جمہوریت کی فتح قرار دیا ہے اور کہا ہے کہ صوبہ بھر کے عوام اس موقع پر مبارکباد کے مستحق ہیں ، اپنے ایک تہنیتی بیان میں انہوں نے کہا کہ جمہوریت میں ہی ہمارے مسائل ومشکلات کا حل موجود ہے ،اے این پی روز اول سے جمہوریت کی مضبوطی اور عوام کی حکمرانی یقینی بنانے کیلئے جدوجہد پر یقین رکھتی ہے ، انہوں نے کہا کہ منتخب حکومتوں کا دورانیہ پورا کرنا جمہوری اداروں کے استحکام اور مضبوطی کی جانب اہم پیش رفت ہے، انہوں نے کہا کہ مستقبل میں بھی تمام حکومتوں کو اپنی آئینی مدت پوری کرنی چاہئے تا کہ حکومتوں کو ڈیلیور کرنے اور عوام کو فیصلہ کرنے میں دشواریوں کا سامنا نہ کرنا پڑے ،سردار حسین بابک نے کہا کہ جمہوریت کی مضبوطی اور بقاء کیلئے سب کو اپنا کردار ادا کرنا چاہئے عوام با شعور ہیں اور انہیں 2018کے الیکشن میں سوچ سمجھ کر فیصلہ کرنا چاہئے ، انہوں نے کہا کہ اے این پی نے صوبائی اسمبلی میں قلیل تعداد میں ہونے کے باوجود صوبے کے مسائل کی مؤثر انداز میں وکالت کی اور مصلحت کے بغیر صوبے کے حقوق پر پارٹی پالیسی کے مطابق عمل پیرا ہو کر اپنا مؤقف پیش کیا ، انہوں نے تمام ممبران اسمبلی بھی شکریہ ادا کیا جنہوں نے پارٹی کے پارلیمانی لیڈر کی حیثیت سے ان کے ساتھ تعاون کیا اور صوبائی اسمبلی میں اپوزیشن میں رہتے ہوئے مؤثر اور مدلل اپوزیشن کا کردار ادا کیا جس کا کریڈٹ پارٹی کے تمام ممبران کو جاتا ہے ،انہوں نے مرکزی صدر اسفندیار ولی خان اور صوبائی صدر امیر حیدر خان ہوتی کا بھی شکریہ ادا کیا جنہوں نے صوبے کی مشکلات اور مسائل پر ان کی رہنمائی کی ، انہوں نے کہا کہ پارٹی ممبران اسمبلی کا بھی مشکور ہوں کہ صوبائی اسمبلی میں پارلیمانی لیڈر کی ذمہ داری سونپی اور اپنی سوچ اور ذہن کے مطابق پانچ سال تک صوبے کا مقدمہ لڑنے کی بھرپور کوشش کی ، سردار بابک نے کہا کہ صوبائی اسمبلی میں اس عہدے پر کئی نامور شخصیات گزریں تاہم میرے لئے بہت اعزاز کی بات ہے کہ ایک ادنیٰ کارکن کی حیثیت سے اپنے کام کے ساتھ انصاف کرنے کی بھرپور کوشش کی۔