ڈالر بے لگام ہو چکا،کسینو معیشت کے ذریعے عوام کو لوٹنے کی روش درست نہیں،حاجی غلام احمد بلور

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی سینئر نائب صدر حاجی غلام احمد بلورنے معیشت کی آئے روز تباہی اور ڈالر کی قیمتوں میں ہوشربا اضافے پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ملک میں مہنگائی کا نیا طوفان سر اٹھانے کو ہے اور مرکزی حکومت نواز شریف کی نا اہلی کا بدلہ عوام سے لے رہی ہے ، اپنے ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ ڈالر کا مہنگا ہونا آئی ایم ایف کی تابعداری کا نتیجہ ہے اور روپے کی بے قدری اور ڈالر مہنگا ہونے سے صنعتوں میں استعمال ہونے والاخام مال مہنگا ہونے سے صنعتی شعبہ متاثر ہوجائے گا۔
انہوں نے کہا کہ ڈالر کی قیمت بڑھنے سے مہنگائی کا سیلاب آئے گا اور صنعتی شعبہ کے ٹرانسپورٹیشن اخراجات بڑھنے سے صنعتی شعبہ دباؤ کا شکار ہوگاجبکہ روپے کے مقابلہ میں ڈالر کی قدر میں اضافے سے حکومتی قرضوں کا بوجھ مزید بڑھ جائے گا جو ملکی معاشی صورتحال کیلئے انتہائی نقصان دہ ہے ، حاجی غلام احمد بلور نے کہا کہ حکومت ڈالر کی بے لگام پرواز کو روکے،انہوں نے کہا کہ روپے کی قدر میں کمی اور ڈالر کی قیمتوں میں بے پناہ اضافے کا براہ راست اثر عوام پر پڑے گا اور درآمدی اشیاء مہنگی ہونے سے مہنگائی کا نیا طوفان آ جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ مرکزی حکومت کی ناقص پالیسیوں کا خمیازہ عوام کو بھگتنا پڑ رہا ہے اور آخری ایام میں حکومتی شخصیات نے مال بنانے کی خاطر ڈالر مارکیٹ سے غائب کر دیا ہے ۔انہوں نے کہا کہ کسینو معیشت کسی صورت ملک و قوم کے مفاد میں نہیں اور ڈالر کی خریدو فروخت پر سٹے بازی خود حکومت کیلئے بھی نقصان دہ ہے۔ جب ڈالر کی قیمت کم ہوتی ہے تو مسلم لیگ (ن)کی پوری حکومت اس کا کریڈٹ لینے کے لئے نکل پڑتی ہے اور جب قیمت بڑھ جاتی ہے تو اس کا سارا پلندہ بعض عناصر پر ڈال کر بری الذمہ ہونے کی کوشش کرتی ہے۔
انہوں نے کہا کہ ملک میں غربت بھی بلند ترین سطح تک پہنچ چکی ہے عوام مہنگائی کی چکی میں پس رہے ہیں اْن کے پاس کھانے کے لئے روٹی نہیں اس جدید دور میں بھی پاکستان میں عوام کی بڑی تعداد روٹی، کپڑا اور مکان کے بغیر زندگی گزارنے پر مجبور ہیں ۔