دوسرے صوبوں میں مثالیں دینے والے اپنے صوبے میں محکمہ تعلیم کے ملازمین سے بے خبر ہیں ،سردار حسین بابک

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی جنرل سیکرٹری سردار حسین بابک نے کہا ہے کہ سروس سٹرکچر محکمہ تعلیم کے مینجمنٹ کیڈر کے ملازمین کا بنیادی حق ہے اور دوسرے صوبوں میں خیبر پختونخوا کے محکمہ تعلیم کی مثالیں دینے والے اپنے صوبے میں ان ملازمین سے بے خبر ہیں ، ان خیالات کا اظہار انہوں نے پشاور میں محکمہ تعلیم کے مینجمنٹ کیڈر کے ملازمین کے احتجای کیمپ کے دورے کے دورے مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے کیا ، انہوں نے کہا کہ صوبائی حکومت ساڑھے چار سال تک اپنی ذمہ داریوں سے غافل رہی اور یہ واحد ھکومت ہے جس میں ملازمین سے لے کر افسران تک اپنے جائز مطالبات کیلئے سڑکوں پر رہے،انہوں نے کہا کہ اے این پی نے اپنے دور حکومت میں مینجمنٹ کیڈر کو اپ گریڈیشن اور چار درجاتی فارمولہ دیا لیکن بد قسمتی سے موجودہ حکومت نے صوبے کے اہم ستون کو نظر انداز کئے رکھا اور اپنی توجہ صرف غیر ضروری سرگرمیوں تک محدود رکھی ، انہوں نے کہا کہ اے این پی نے اپنے دور میں مینجمنٹ اور کیڈر کو الگ کیا جبکہ پرائمری اساتذہ کیلئے سروس سٹرکچر اور پروموشن کا اعلان کیا جس سے انہوں نے گریڈ 14اور15تک ترقی پائی ، سردار بابک نے کہا کہ پرائمری سکولوں میں اساتذہ کی کمی پوری کرنے کا سہرا بھی اے این پی کے سر ہے، سردار حسین بابک نے کہا کہ احتجاج پر بیٹھے ملازمین اپنا جائز حق مانگ رہے ہیں لیکن کسی حکومتی عہدیدار نے ان کی دادرسی کی زحمت گوارا نہ کی، انہوں نے کہا کہ کئی روز سے جاری مظاہرین کے احتجاج کے باعث ان میں بے چینی پھیلی ہوئی ہے لیکن حکمران اپنی ذمہ داریوں کو سنجیدہ لینے کیلئےء ہر گز تیار نہیں ، انہوں نے مطالبہ کیا کہ احتجاجی مظاہرین کے مطالبات جلد از جلد تسلیم کئے جائیں اور اپ گریڈیشن و سروس سٹرکچر کا اعلان کر کے ان میں پائی جانے والی بے چینی کا خاتمہ کیا جائے۔