میاں افتخار حسین کا یکہ توت دھماکے کے شہداء کے لواحقین سے اظہار تعزیت
شہر کے مختلف علاقوں کا دورہ ،لیڈی ریڈنگ ہسپتال میں زخمیوں کی عیادت بھی کی۔
زخمی کارکنوں کا مورال بلند ، الیکشن میں بھرپور حصہ لینے کا عزم 
دہشت گرد حملے ہمارے حوصلے پست نہیں کر سکتے ۔
اے این پی پہلے سے زیادہ قوت کے ساتھ میدان میں نکلے گی ، مستقل امن کے قیام کو ترجیح بنائیں گے۔
،الیکشن میں مخصوص قوتوں کیلئے میدان خالی نہیں چھوڑیں گے۔ میاں افتخار حسین

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی جنرل سیکرٹری میاں افتخار حسین نے کہا ہے کہ دہشت گردی ہمیں الیکشن سے آؤٹ کرنے کے درپے ہیں تاہم اے این پی پہلے سے زیادہ قوت کے ساتھ میدان میں نکلے گی اور کامیاب ہو کر مستقل امن کے قیام کو ترجیح بنائے گی ، ان خیالات کا اظہار انہوں نے اندرون شہر دورے کے دوران یکہ توت بم دھماکے کے شہداء کے لواحقین سے تعزیت اور فاتحہ خوانی کے بعد کیا ، میاں افتخار حسین تمام شہداء کی رہائش گاہوں پر گئے اور ان کے لواحقین سے افسوس کا اظہار کرتے ہوئے شہداء کی مغفرت کیلئے فاتحہ خوانی کی ، بعد ازاں انہوں نے لیڈی ریڈنگ ہسپتال کا بھی دورہ کیا جہاں انہوں نے دھماکے کے زخمیوں کی عیادت کی ،میاں افتخار حسین نے کہا کہیکہ توت میں ہونے والا دھماکہ بدترین کاروائی ہے جس کی جتنی مذمت کی جائے کم ہے، دہشت گرد حملے اے این پی کا راستہ نہیں روک سکتے ،الیکشن میں مخصوص قوتوں کیلئے میدان خالی نہیں چھوڑیں گے اور الیکشن میں بھرپور کامیابی حاصل کریں گے ، انہوں نے عوام سے اپیل کی کہ دہشت گردی کے اس ناسور کو جڑ سے اکھاڑ پھینکنے کیلئے 25جولائی کو اے این پی پر اپنے بھرپور اعتماد کا اظہار کریں تاکہ آنے والی نسلوں کا مستقبل محفوظ بنایا جا سکے،اس موقع پر زخمی افراد نے میاں افتخار حسین کا شکریہ ادا کیا اور کہا کہ ہمارا مورال بلند ہے اور دہشت گرد حملے ہمارا حوصلہ پست نہیں کر سکتے ، انہوں نے یقین دلایا کہ الیکشن میں بھرپور شرکت کریں گے ،قبل ازیں میاں افتخار حسین نے قائمقام وزیر اعطم جسٹس ناصر الملک اور آرمی چیف قمر جاوید باجوہ کا بلور ہاؤس پہنچنے پر استقبال کیا، جنہوں نے حاجی غلام احمد بلور سے شہید ہارون بلور کی شہادت پر تعزیت اور فاتحہ خوانی کی۔