مستقبل اے این پی کا ہے،حکومت میں آ کر عوامی خدمت کی نئی تاریخ رقم کریں گے، امیر حیدر خان ہوتی

مردان کے عوام نے الیکشن سے قبل اپنا فیصلہ سنا دیا ہے،اے این پی کے خاتمے کی باتیں کرنے والے عوامی سیلاب دیکھیں۔

اے این پی عوام کی ترقی اور خوشحالی کا جامع پلان لے کر آئی ہے ، تعلیم ،امن اور بے روزگاری کے خاتمے پر توجہ دی جائے گی۔

سابق حکومت نے مختلف حربوں سے خزانہ پر ہاتھ صاف کیا ، 6ماہ میں 21کروڑ کی چائے اور بسکٹ کھائے گئے۔

آنے والے الیکشن میں پختون قوم کی قسمت کا فیصلہ ہونے جا رہا ہے،پختون آپس میں اتحاد و اتفاق کا مظاہرہ کریں۔

حکومت میں آ کر مرکز سے صوبے کے حقوق کے حصول کیلئے ہر حد تک جائیں گے۔

عوام اپنے حقوق کے تحفظ اور اپنی آئندہ نسلوں کی بقا کیلئے اے این پی کو کامیاب کریں، مردان میں گرینڈ جلسہ عام سے خطاب

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی صدر امیر حیدر خان ہوتی نے کہا ہے کہ الیکشن پختون قوم کی قسمت کا فیصلہ کرے گا اور حکومت میں آ کر صوبے کے عوام کی خدمت میں کوئی کسر اٹھا نہیں رکھیں گے،مردان کے عوام نے الیکشن سے قبل اپنا فیصلہ سنا دیا ہے ،مستقبل اے این پی کا ہے ،ان خیالات کا اظہار انہوں نے مردان ہوتی ہاؤس گراؤنڈ میں گرینڈ پاور شو سے خطاب کرتے ہوئے کیا ، اس موقع پر ضلعی صدر حمایت اللہ مایار ،جنرل سیکرٹری حاجی لطیف الرحمان ، جاوید خان یوسفزئیاور مردان سے نامزد امیدواروں نے بھی خطاب کیا،انہوں نے کہا کہ اے این پی کے خاتمے کی باتیں کرنے والے مردان آئیں اور عوام کا سمندر دیکھیں ، آنے والے الیکشن میں پختون قوم کی قسمت کا فیصلہ ہونے جا رہا ہے ،حکومت میں آئے تو عوامی خدمت کی نئی تاریخ رقم کریں گے، انہوں نے کہا کہ اے این پی عوام کی ترقی اور خوشحالی کا جامع پلان لے کر آئی ہے ،جس میں تعلیم ،امن اور بے روزگاری کے خاتمے پر توجہ دی جائے گی، ہر ضلعی میں سرکاری یونیورسٹی اور ہر حلقہ میں کالج قائم کریں گے،انہوں نے انتخابی مہم میں کوششوں اور جدوجہد کو سلام پیش کیا اور کہا کہ ان کوششوں کے نتیجے میں صوبے میں اے این پی کی حکومت قائم ہو گی،انہوں نے مردان کے سابق ممبران اسمبلی احمد بہادر خان اور گوہر شاہ باچہ کا بھی شکریہ ادا کیا،امیر حیدر خان ہوتی نے کہا کہ سابق حکومت نے مختلف حربوں سے خزانہ پر ہاتھ صاف کیا ، 6ماہ میں 21کروڑ کی چائے اور بسکٹ کھائے گئے ،انہوں نے کہا کہ صحت کے نظام میں انقلابی اصلاحات لے کر آئیں گے اور کسی بھی ضلع سے مریضوں کو پشاور منتقل کرنے کی بجائے وہیں ان کا جدید علاج ہو سکے گا،امیر حیدر خان ہوتی نے کہا کہ مرکز سے صوبے کے حقوق حاصل کریں گے اور اپنے وسائل پر اپنا ختیار حاصل کرنے کیلئے ہر ممکن اقدامات کئے جائیں گے،انہوں نے کہا کہ خزانہ خالی کر دیا گیا ہے، انہوں نے مزید کہا کہ سابق حکومت نے370ارب کا قرضہ لے کر ہڑپ کر لیا ، نیب نے کرپشن کی تحقیقات شروع کر دی ہیں ، امیرحیدرخان ہوتی نے کہاکہ انتہائی افسوس کا مقام ہے کہ حکومت کی غیر سنجیدگی کی وجہ سے بے روزگاری اور مہنگائی میں اضافہ ہوا ، انہوں نے کہا کہ اے این پی کامیابی کے بعد بے روزگاری کے خاتمے پر توجہ دے گی اور نوجوانوں کو 10لاکھ تک بلاسود قرضے فراہم کرے گی تاکہ وہ اپنے لئے روزگار کے مواقع پیدا کر سکیں ، انہوں نے کہا کہ ترقی کے ایک نئے دور کا آغاز کیا جائے گا، انہوں نے پارٹی عہدیداروں اور کارکنوں پر زور دیا کہ الیکشن کی بھرپور تیاریاں جاری رکھیں اور عوام اپنے حقوق کے تحفظ اور اپنی آئندہ نسلوں کی بقا کیلئے اے این پی کو کامیاب کریں، انہوں نے کہا کہ اقتدارمیں آکرنہ صرف خالی خزانہ بھریں گے بلکہ ترقی کا رکا ہوا پہیہ دوبارہ چلائیں گے، انہوں نے پختونوں سے کہا کہ آپس میں اتحاد واتفاق پیدا کریں اور 25جولائی کو باچا خان کے پیروکاروں کو کامیاب کرا کے اپنا مستقبل محفوظ بنائیں۔