کرپشن خاتمے کے بلند وبانگ دعوے کرنے والوں کی فائلیں نیب نے کھول دی ہیں، امیر حیدر خان ہوتی

پشاور(پ ر) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی صدر امیر حیدر خان ہوتی نے کہا ہے کہ پشاور میٹرو اے این پی مکمل کرے گی کیونکہ موجودہ ھکومت نے اسے صرف اپنی کمیشن کیلئے شروع کیا ہے، ان خیالات کا اظہار انہوں نے تخت بھائی جنڈے میں ایک بڑے شمولیتی جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے کیا جس میں پیپلز پارٹی کے ڈسٹرکٹ ممبر ملک بشیرخان نے اپنی پارٹی سے مستعفی ہوکر سینکڑوں ساتھیوں سمیت عوامی نیشنل پارٹی میں شمولیت کا اعلان کردیا، امیرحیدرخان ہوتی نے ملک بشیرخان اوران کے ساتھیوں کا شکریہ اداکرتے انہیں پارٹی ٹوپیاں پہنائیں اور مبارک دیتے ہوئے اپنے خطاب میں کہاکہ اے این پی کے خاتمے کا خواب دیکھنے والے دیکھ لیں کہ آج صوبہ بھر میں سرخ سیلاب امڈ آیاہے سونامی کو بچ نکلنے کا راستہ نہیں ملے گا ،انہوں نے کہاکہ نام نہاد تبدیلی والے ساڑھے چارسال تک لاہور میٹرو کو جنگلہ بس کہتے رہے اب حکومت نے پشاور میٹرو کو اپنی کمیشن کے لئے شروع کیا یہ منصوبہ ان کے دور حکومت میں مکمل نہیں ہوگا یہ اوردیگر منصوبے اقتدار میں آکر ہم مکمل کریں گے، انہوں نے کہاکہ تبدیلی کے دعویداروں نے صوبے کے تمام نظام کو تباہ وبرباد کیا اقتدار میں آکر نئے سرے سے ادارے بحال کریں گے، انہوں نے کہاکہ کرپشن کے خاتمے کے بلند وبانگ دعوے کرنے والوں کی فائلیں نیب نے کھول دی ہیں اور ملم جبہ اراضی سے لے کر وزیراعلیٰ کے حکم پر پی ڈی اے کے ٹھیکوں کی بازپرس شروع ہوگئی ہے، امیرحیدرخان ہوتی نے کہاکہ وہ بطور پاکستانی نیب کے چیئرمین کومبارک باددیتے ہیں اوران سے مطالبہ کرتے ہیں کہ نیب پشاور کی سفارشات منظور کرکے سابق ڈی جی پی ڈی اے پر ہاتھ ڈالا جائے تو وہ سلطانی گواہ بن کرسب کچھ اگل دیں گے ،اے این پی کے صوبائی صدر نے کہاکہ ابھی تو حساب کتاب کی شروعات ہے آنے والے دنوں میں بات دورتک جائے گی ان کاکہناتھاکہ پی ٹی آئی کے اپنے اراکین اسمبلی وزراء پر اور وزیر اپنے وزیراعلیٰ کے خلاف سلطانی گواہ بن رہے ہیں،امیرحیدرخان ہوتی نے وزیر تعلیم محمد عاطف خان کو این اے 9پر مقابلے کا دوبارہ چیلنج دیا اورکہاکہ اگر وہ اکھاڑے میں نہیں آسکتے تو اپنے وزیراعلیٰ یاشاہ محمود قریشی کو بلائیں اوراگر وہ بھی نہیں آسکتے تو اپنے بڑے پہلوان کپتان کو کہیں کہ آکر باچاخان کے سپاہیوں کا مقابلہ کریں توانہیں اپنے قد کاٹھ کا پتہ چل جائے گا ۔امیرحیدرخان ہوتی نے مزید کہاکہ اقتدار چھوڑتے وقت انہوں نے خزانہ بھراچھوڑاتھا اب خزانے کی صحت اور وزیراعلیٰ کی صحت میں کوئی فرق نہیں اور ترقیاتی منصوبوں کے لئے قرضے لئے جارہے ہیں اے این پی اقتدار میں آکر قرضے بھی ختم کرے گی اور رکے ہوئے منصوبے بھی دوبارہ شروع کرے گی انہوں نے مزید کہاکہ پختون جاگ گئے ہیں وہ مزید خوشنما دعووں اور وعدوں میں نہیں آئیں گے۔