عوامی نیشنل پارٹی کی کابل میں دہشت گرد حملے کی مذمت، افغان حکومت اور عوام سے اظہار یکجہتی

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی سیکرٹری جنرل میاں افتخار حسین نے کابل انٹر کانٹینینٹل ہوٹل پر حملے کی شدید مذمت کرتے ہوئے افسوسناک سانحے میںافغان کونسل جنرل عبدالوحید پوھان کی شہادت پر گہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کیااور سانحے میں جاں بحق ہونے والوں کی مغفرت اور زخمیوں کی جلد صحت یابی کیلئے دعا کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ افغان کونسل جنرل عبدالوحید پوھان ایک بہترین سفارتکار تھے، انہوں نے پشاور میں احسن طریقے سے اپنی خدمات سرانجام دیے اور اب کراچی میں بھی پاکستان اور افغانستان کی بہتر تعلقات کو قائم کرنے میں کلیدی کردار ادا کر رہے تھے۔ میاں افتخار حسین نے عبدالوحید پوھان کی خدمات کا اعتراف کرتے ہوئے کہا کہ انہوں نے افغان مہاجرین کا مسئلہ احسن طریقے سے حل کرنے میں اہم کردار ادا کیا۔ وہ ایک اچھے سفارتکار ہونے کے ساتھ ساتھ پاکستان اور افغانستان کے اچھے تعلقات کے خواہشات اور جذبات بھی رکھتے تھے۔ انہوں نے کہا کہ عبدالوحید پوھان کی پاک افغان تعلقات میں بہتری لانے کی کوششیں اس بات کا ثبوت ہے کہ وہ ایک امن پسندانسان تھے اور وہ یہ سمجھتے تھے کہ پاک افغان بہتر تعلقات امن کی ضامن ہے۔ آج دنیا ایک مدبر،امن پسند اور بہترین سفارتکار سے محروم ہوئی۔میاں افتخار حسین نے کہا کہ ہم باچا خان بابا کے پیروکار ہیں، عدم تشدد ہمارا فلسفہ ہے اوردنیا کے جس کونے میں بھی دہشت گردی کے واقعات ہوتے ہیں ہم اس کی مذمت کرتے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ دہشت گردی کے خلاف جدوجہد اور موثر کاروائیوں کی ضرورت ہے ۔انہوں نے کہا کہ کابل میں ہونے والی دہشت گردی کی کاروائی اپنی نوعیت کی بدترین کاروائی تھی اور غم کی اس گھڑی میں ہم افغان عوام اور حکومت کے ساتھ ہیں، انہوں نے لواحقین کے ساتھ یکجہتی کا اظہار کیا اورجاں بحق ہونے والوں کی مغفرت اور زخمیوں کی جلد صحت یابی کیلئے دعا کی ہے۔