سیاسی قیادت اور اسٹیبلشمنٹ نئی خارجہ پالیسی بنانے کیلئے اپنی ذمہ داری پوری کرے، زاہد خان

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی سیکرٹری اطلاعات زاہد خان نے کہا ہے کہ ملکی مفاد کو مدنظر رکھ کر حکومت ، سیاسی قیادت اور اسٹیبلشمنٹ نئی خارجہ پالیسی بنانے کیلئے اپنی ذمہ داری پوری کرے۔اپنے ایک بیان میں اُنہوں نے کہا کہ ملک کی خود مختاری اور آزادی کی قیمت پر اتحادی بن کر بہت نقصان اٹھا چکے ہیں اور اس دوران صوبہ خیبر پختونخوا کے ہر گھر سے لاش اُٹھی جبکہ فاٹا کا بنیادی ڈھانچہ تباہ ہوا۔ زاہد خان نے مزید کہا کہ امریکہ کے نیو ورلڈ آرڈر کا نتیجہ ہے کہ ہم معاشرتی و سماجی طور پر شدید کمزور ہوگئے ہیں۔ اُنہوں نے کہا کہ اندرونی استحکا م کیلئے نیشنل ایکشن پلان پر عمل نہیں کیا جارہا ۔ دارالعلوم حقانیہ کو صوبہ خیبر پختونخوا کے بجٹ سے تیس کروڑ روپے دینے والی حکومت کے وزیر اعلیٰ کالعدم تنظیموں کے پشاور میں جلسوں سے خطاب کرتے ہیں جس پر وفاقی حکومت اور ذمہ دار اداروں کی خاموشی سوالیہ نشان ہے۔ اُنہوں نے کہا کہ ہمسایہ ممالک کے ساتھ تعلقات بہتر نہ ہونے پر قوم کو پارلیمنٹ کے ذ ریعے اعتماد میں لیا جائے ۔ قومی اتحاد کے ذریعے ہی بیرونی و اندرونی خطرات کا مقابلہ کیا جاسکتاہے۔