اے این پی اپنے کارکنوں کے ناحق خون کا حساب ضرور لے گی، امیر حیدر خان ہوتی

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی صدر امیر حیدر خان ہوتی نے کہا ہے کہ پختونوں کو ٹارگٹ کرنے کا سلسلہ تھمنے کا نام نہیں لے رہا اور اے این پی اپنے کارکنوں کے ناحق خون کا حساب ضرور لے گی، باجوڑ میں اے این پی کے ضلعی جنرل سیکرٹری گل افضل خان نے ان کے بھائی سید عظیم خان کی شہادت پر دلی تعزیت کا اظہار کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ شہید سید عظیم نے ہمیشہ ظلم کے خلاف آواز اٹھائی اور لندن میں رہتے ہوئے بھی پاکستان میں پختونوں پر ہوانے مظالم کے خلاف ہر فورم پر آواز اٹھاتے رہے ، اے این پی کے صوبائی نائب صدر جاوید خان یوسفزئی ، ضلع دیر پائیں کے صدر حسین شاہ یوسفزئی اور پی کے 95سے امیدوار حاجی بہادر خان بھی ان کے ہمراہ تھے، انہوں نے کہا کہ شہید نے جمہوریت کی بالادستی کیلئے بھی اپنا بھرپور کردار ادا کیا اور انتہائی افسوسناک بات یہ ہے کہ ظلم کے خلاف آواز اٹھانے والا خود ظلم کی بھینٹ چڑھ گیا ہے ، انہوں نے کہا کہ سید عظیم کا قتل جس نے بھی کیا سزا سے نہیں بچنا چاہئے اور اسے کیفر کردار تک پہنچا کر مستقبل میں ایسے واقعات کا راستہ روکنے کیلئے حکمت عملی بنائی جائے ، انہوں نے شہید کے بلندی درجات کیلئے دعا کی اور پارٹی کیلئے ان کی خدمات کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ اے این پی سید عظیم سمیت شہید کئے جانے والے بے گناہ پختونوں کے خون کا حساب لے گی۔ صوبائی صدر امیر حیدر خان ہوتی نے گزشتہ دنوں کراچی میں شہید کئے جانے والے باجوڑ کے نوجوان احمد شاہ کے قتل کی بھی مذمت کی اور کہا کہ احمد شاہ کو شہید کر کے نقیب اللہ محسود کی یاد پھر سے تازہ کر دی گئی ، انہوں نے کہا کہ احمد شاہ کے قتل سے یہ بات واضح ہو چکی ہے کہ پختونوں کو سازش کے تحت ٹارگٹ کیا جا رہا ہے ، انہوں نے کہا کہ پختونوں کی بدقسمتی ہے کہ غربت سے تنگ آ کر رزق کی تلاش میں دوسرے شہروں کو جانے والوں کی لاشیں ان کے لواحقین تک پہنچتی ہیں ، انہوں نے کہا کہ اے این پی ان بہیمانہ واقعات پر خاموش نہیں رہے گی اور پختونوں کے تحفظ کیلئے آواز بلند کرتی رہے گی۔