سلیم صافی کا میڈیا ٹرائل آزادی صحافت پر وار ہے ، اسفندیار ولی خان 

صحافی ملک کا اثاثہ ہیں اور ان کے خلاف میڈیا ٹرائل اور ہتک آمیز رویہ قابل مذمت ہے۔

ایسا ماحول پیدا کرنے سے گریز کیا جائے جس سے نفرت کو فروغ اور عزت نفس کو نقصان پہنچے۔

صحافتی تجزیوں پرہنگامہ آرائی اور اظہاررائے کی آزادی پر قدغن معاشرے کیلئے نیک شگون نہیں۔

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی صدر اسفندیار ولی خان نے ملک کے نامور سینئر صحافی سلیم صافی کے خلاف سوشل میڈیا پردشنام طرازی کی جاری مہم کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایک نامور صحافی کے خلاف جو زبان استعمال کی جارہی ہے وہ انتہائی افسوس ناک ہے ، اپنے ایک بیان میں اسفندیار ولی خان نے کہا کہ صحافت اور صحافی برادری اس معاشرے کا قابل احترام طبقہ ہے ،تنقید ہر شہری کا حق ہے تاہم اخلاقیات کے دائرے میں رہتے ہوئے تنقید کا جواب مدلل دلائل سے دیا جانا چاہئے ،انہوں نے کہا کہ صحافی ملک کا اثاثہ ہیں اور ان کے خلاف میڈیا ٹرائل اور ہتک آمیز رویہ قابل مذمت ہے ، اسفندیار ولی خان نے کہا کہ ایسا ماحول پیدا کرنے سے گریز کیا جائے جس سے نفرت کو فروغ اور عزت نفس کو نقصان پہنچے ، انہوں نے کہا کہ ایک سینئر صحافی کے تجزیہ پرہنگامہ اظہاررائے کی آزادی پر قدغن کے مترادف ہے تنقیدکو خندہ پیشانی سے برداشت کرنے کے بجائے الزامات اور بد زبانی کی مہم کسی طور سیاسی کلچر کا حصہ نہیں ، انہوں نے کہا کہ سلیم صافی کا میڈیا ٹرائل بند کر کے برداشت کا ماحول پیدا کیا جائے۔