اے این پی کافاٹا مظاہرے میں شرکت کیلئے 9اکتوبر صبح دس بجے پشاور انٹر چینج سے روانگی کا اعلان

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی جنرل سیکرٹری میاں افتخار حسین نے اعلان کیا ہے کہ فاٹا کے ایشو پر اسلام آباد مظاہرے میں شرکت کیلئے اے این پی کا قافلہ9اکتوبر کو پشاور انٹرچینج سے صبح دس بجے روانہ ہوگا جس کی قیادت پارٹی کے مرکزی و صوبائی قائدین کرینگے ، تمام پارٹی عہدیداروں اور کارکنوں کو ہدایت کی جاتی ہے کہ وہ فاٹا انضمام کے حوالے سے9اکتوبر کے مظاہرے میں بھرپور شرکت یقینی بنائیں۔اس امر کا اعلان انہوں نے اسلام آباد میں قبائلی مشران اور دیگر سیاسی جماعتوں کے قائدین کے ایک جرگہ میں اظہار خیال اور بعد ازاں میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کیا ،قبائلی جرگہ میں اے این پی کی قیادت میاں افتخار حسین نے کی اور اس موقع پر اسلام باد مظاہرے کے پروگرام کو حتمی شکل دی گئی ، اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے میاں افتخار حسین نے کہا کہ فاٹا کے صوبے میں انضمام کے حوالے سے ایک تاریخی موقع ہے اور حکومت وقت کو اس بات پر مجبور کرنا ہے کہ وہ اس تاریخی موقع سے فائدہ اٹھاتے ہوئے فاٹا کے صوبے میں انضمام کا اعلان کرے ، انہوں نے کہا کہ اس اہم قومی ایشو پر ملک کی تقریباً تمام سیاسی جماعتیں ، عسکری قیادت، قبائلی عوام اور تمام سٹیک ہولڈرز سمیت ہر مکتبہ فکر سے تعلق رکھنے والے افراد متفق ہیں لہٰذا اس میں مزید تاخیر سے خدشات و تحفظات جنم لے رہے ہیں، انہوں نے کہا کہ اس حوالے سے بہت سی تیاری مکمل ہے تاہم حکومت کو چاہئے کہ وہ اسے جلد از جلد پائی تکمیل تک پہنچائے کیونکہ غیر ضروری تاخیر سے بعد ازاں مشکلات پیدا ہو سکتی ہیں،انہوں نے کہا کہ یہ ایک پر امن احتجاج ہے اور مرکزی حکومت اس احتجاج کو ملک کی اکثریتی آبادی کی آواز کے طور پر سنے،انہوں نے کہا کہ نوشہرہ ، مردان اور صوابی کے ذمہ داروں سے رابطہ ہو بھی چکا ہے البتہ اس خبر کو بھی اطلاع تصور کر کے تمام اضلاع کے زمہ داران اور پارٹی کارکنان مظاہرے میں بھرپور شرکت یقینی بنائیں،میاں افتخار حسین نے کہا کہ اسلام آباد پہنچنے کے بعد اسلام آباد پریس کلب کے سامنے احتجاجی مظاہرین جمع ہو نگے جس کے بعد ڈی چوک کی جانب روانہ ہونگے ، تاہم قبائلی مشران اس حوالے سے ممکنہ پریس کانفرنس کے ذریعے آئندہ کے لائحہ عمل کا اعلان کریں گے۔