مورخہ یکم جنوری 2016ء بروز جمعہ

حقائق سے ثابت ہوتا ہے کہ ہماریحکومت موجودہ حکومت سے بہت بہتر اورمختلف تھی
پی ٹی آئی کی حکومت تبدیلی کے نعروں سے آگے نہیں بڑھ سکی
عوام ان کو ووٹ دینے کے اپنے فیصلے پر پچھتا رہے ہیں ۔ نوشہرہ میں ایک شمولیتی تقریب سے خطاب

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی صدر امیر حیدر خان ہوتی نے کہا کہ اے این پی نے اپنے پانچ سالہ دور اقتدار میں جہا ں ایک طرف بدترین حالات کے باوجود دہشت گردی کا مقابلہ کیا ہے اور بے پناہ قربانیا ں دیں ہیں وہاں صوبے میں ریکارڈ ترقیاتی منصوبے بھی پایہ تکمیل تک پہنچائے تا ہم مو جودہ حکومت دعوؤں اور اعلانات سے آگے نہیں بڑھ سکی یہی وجہ ہے کہ صوبے کو شدید مشکلات اور بدترین حالات کا سامنا ہے ۔جمعہ کے روز نوشہرہ مین ایک شمولیتی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے سا بق وزیراعلیٰ نے کہا کہ اے این پی نا مساعد حالات کے باوجود امن ‘تعلیم ‘ ترقی اور معاشرتی استحکام کے لئے نہ صرف یہ کہ ریکارڈ یونیورسٹیوں ‘کالجوں ‘سکولوں ‘ ہسپتالوں اور سڑکوں کا جال بچھایا بلکہ انتہاء پسندی کا بھی ڈٹ کر مقابلہ کیا اگر ہم نے قربانیا ں نہیں دی ہوتیں تو صورتحال کئی گنا زیادہ خراب ہو تی ۔انہوں نے کہا کہ پی ٹی آئی کو ہماری چیلنجز کا سامنا نہیں ہے تاہم اس کی کارکردگی ا نتہائی سست ہے اور بری ہے اور عوام ان کو ووٹ دینے کے اپنے فیصلے پر پچھتا رہے ہیں تبدیلی کے جو دعوے کئے گئے تھے وہ اعلانات اور خواہشات سے آگے نہ بڑھ سکے اور اسی کا نتیجہ ہے کہ حالیہ بلدیاتی الیکشن میں پی ٹی آئی کو وہ منڈیٹ نہیں ملا جس کی ان کی توقع تھی انہوں نے کہا کہ وہ مو جودہ وزیر اعلیٰ کو چیلنج کرتے ہیں کہ وہ جب چاہیں اے این پی کا دور کا اپنے دورحکومت کے ساتھ موازنہ کرے اور ثابت کرے کہ ان کی حکومت پچھلی حکومت سے بہتر یا مختلف ہے سچی بات تو یہ ہے کہ ہماری حکومت تمام تر رکاوٹوں کے باوجود عملاموجودہ حکومت سے بہت بہتر تھی اس موقع اے این پی مرکزی سیکرٹری جنرل میا ں افتخار حسین اور ضلعی صدر جمعہ خان نے بھی خطاب کیا۔