کراچی ۔10مئی 2016
عوامی نیشنل پارٹی سندھ کے صدر سینیٹر شاہی سید نے کہا ہے کہ شدید گرمی میں بجلی و پانی بندش نے شہریوں کا جینا محال کردیا ہے کراچی واٹر بورڈانتظامیہ کی انتہائی ناقص کارکردگی کی وجہ سے شہر میں پانی کا شدید بحران پیدا ہوگیا ہے سورج کی تپش میں پانی و بجلی کے بحران سے شہریوں میں شدید اشتعال پایا جاتا ہے دونوں محکمے موسم کے ہاتھوں بے حال شہریوں پر کاری ضربیں لگارہے ہیں جیسے ہی گرمی کا زور بڑھتا ہے فنی خرابی کے نام پر بجلی کا عدم موجودگی کا دورانیہ ناتمام ہوجاتا ہے شہری بلبلا رہے ہیں حکمرانوں کی کانوں پر جوں تک نہیں رینگتی مینڈیٹ کا راگ الاپنے والے سیاسی پوائنٹ اسکورنگ میں مصروف ہیں اورکراچی کی عوام کو بے یار و مدد گار چھوڑ دیا گیا ہے ،کے الیکٹرک انتظامیہ مختلف قسم کے چارجز کی تیز دھار سے شہریوں تیا پانچہ کرنے کے لیے ہمہ وقت تیار رہتی ہے اور بجلی کی بروقت فراہمی میں مکمل طور پر ناکام ہوچکی ہے ان خیالات کا اظہار اے این پی سندھ کے صدر اور پختون ایکشن کمیٹی (لویہ جرگہ) کے چیئر مین سینیٹر شاہی سید نے مردان ہاؤس میں ضلع غربی سے آئے مختلف پارٹی وفود سے ملاقات کرتے ہوئے کیا ،انہوں نے مذید کہا کہ کے الیکٹرک انتظامیہ مختلف حیلوں بہانوں سے شہریوں کا خون نچوڑ نے کے لیے ہمہ وقت تیار رہتی ہے گزشتہ سال ہیٹ اسٹروک سے ہزارسے زائد ہلاکتو ں کے باوجود کے الیکٹرک انتظامیہ نے کوئی سبق حاصل نہیں کیا ہے حکومتی اداروں کی تحقیقات نے گزشتہ سال گرمی سے سینکڑوں شہریوں کے جان سے ہاتھ دھونے والے واقعے کی ذمہ داری کے الیکٹرک پر عائد کی تھی وفاقی حکومت کے الیکٹرک انتظامیہ کی ناقص کارکردگی کا فی الفور نوٹس لے،اس موقع پر سینیٹر شاہی سید نے مذید کہا کہ اب بھی وقت ہے ارباب اختیار اپنا قبلہ درست کریں اور مہنگائی کی چکی میں پسے اور موسم کے ستائے ہوئے شہریوں سے جینے کا حق مت چھینے ،پا نی کی تقسیم میں اقربا پروری کسی صورت برداشت نہیں کریں گے کراچی واٹر بورڈ شہر میں پانی کی منصفانہ تقسیم کو یقینی بنائیں اگر کراچی کی عوام نے دونوں اداروں کے خلاف سڑکوں پر آنے کا فیصلہ کیا تو عوامی نیشنل پارٹی شہریوں کا بھر پور ساتھ دے گی۔