مورخہ 2مارچ 2016ء بروز بدھ

پودوں کی خریداری میں کروڑوں کی کرپشن حکومتی نا اہلی کا بین ثبوت ہے، ہارون بشیر بلور
صوبے کی نرسریوں کو چھوڑ کر پنجاب کے ٹھیکیدار کو ڈیڑھ کروڑ روپے کا ٹھیکہ دینا نا قابل فہم ہے۔

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی ترجمان ہارون بشیر بلور نے باب پشاور کیلئے بغیر موسم ڈیڑھ کروڑ کے پودوں کی خریداری پر گہری تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ کرپٹ مافیا قومی خزانہ بے دردی سے لوٹنے میں مصروف ہے جبکہ حکمرانوں نے کرپشن پر آنکھیں موند رکھی ہیں ، اے این پی سیکرٹریٹ سے جاری بیان میں انہوں نے کہا کہ مقامی نرسریوں کو نظر انداز کر کے پنجاب کے ٹھکیداروں کو قومی خزانے سے نوازا جا رہا ہے،انہوں نے کہا کہ زیادہ تر پودے سردی کے باعث اور کچھ بوئے بنا ہی مرجھا گئے ہیں لیکن اتنے بڑے پیمانے پر ہونے والی کرپشن کسی کو نظر نہیں آ رہی ، انہوں نے کہا کہ کپتان کے کرپشن فری صوبے کے دعوے ان کی اپنی جماعت کے حکمرانوں نے ہی ہوا میں اڑا دیئے ہیں ، ہارون بشیر بلور نے کہا کہ باب پشاور کی تعمیر کے وقت وہاں پر موجود سینکڑوں نرسریوں کو نیست و نابود کیا گیا اور اب جو بچی ہیں ان کے آگے گڑھے کھود دیئے ہیں تا کہ ان کا کاروبار نہ چل سکے، انہوں نے کہا کہ پشاور شہر ناپرسان کا منظر پیش کر رہا ہے جبکہ حکمران لوگوں سے روزگار چھین کر خود بلین ٹری مہم چلانے میں مصروف ہیں ، صوبائی ترجمان نے کہا کہ صوبائی حکومت باب پشاور کے گرد لگائے جانے والے پودوں کی خریداری میں ہونے والی کروڑوں کی کرپشن کا نوٹس لیں اور عوام کو صحیح صورتحال سے آگاہ کیا جائے ۔