مورخہ 2 جون 2016ء بروز جمعرات

نرسوں کے مطالبات تسلیم کرنے میں دیر ہوئی تو حکومت کیلئے مشکلات بڑھ سکتی ہیں، میاں افتخار حسین
خواتین کا اپنے حقوق کیلئے سڑکوں پر آنا خیبر پختونخوا کی معاشرتی اقدار کے خلاف اور حکمرانوں کیلئے باعث شرم ہے
عمران خان، وزیر اعلیٰ پرویز خٹک یا سیکرٹری ہیلتھ اس موقع پر احتجاج کرنے والی نرسوں سے مذاکرات کریں
سول سوسائٹی اور دیگر سیاسی جماعتیں نرسوں کے جائز حقوق کیلئے آواز اٹھائیں ، اے این پی عوامی مسائل پر سیاست نہیں کرتی
اے این پی عوامی مسائل پر سیاست نہیں کرتی،ہمیشہ عوام کے حقوق کے تحفظ کیلئے کام کیا ہے، نرسوں کے دھرنے سے خطاب

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی سیکرٹری جنرل میاں افتخار حسین نے کہا ہے کہ خیبر پختونخوا میں خواتین کا اپنے حقوق کیلئے سڑکوں پر آنا انتہائی شرمناک ہے،اور اس کا کریڈٹ تحریک انصاف کی حکومت کو جاتا ہے، صوبائی اسمبلی کے باہر نرسوں کے احتجاجی دھرنے و مظاہرے سے خطاب اور میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے میاں افتخار حسین نے کہا کہ سروس سٹرکچر، پروموشن اور الاؤنسز کے حوالے سے نرسوں کے مطالبات جائز اور مناسب وقت پر ہیں کیونکہ بجٹ تیاری کے مراحل میں ہے اور اس وقت ان مطالبات کو تسلیم کرنا حکومت کیلئے انتہائی آسان ہے،انہوں نے کہا کہ نرسوں کے جائز مطالبات فوری تسلیم کئے جائیں اور اگر حکومت نے دیر کی تو اس کیلئے بڑی مشکلات کھڑی ہو سکتی ہیں، انہوں نے کہا کہ خیبر پختونخوا کی تاریخ میں خواتین کبھی اپنے جائز حقوق کیلئے سڑکوں پر نہیں آئیں کیونکہ یہ ہماری معاشرتی اقدار کے خلاف ہے، انہوں نے کہا کہ اگر کپتان تخت اسلام آباد کیلئے مہینوں دھرنا دے سکتے ہیں تو جائز حقوق کیلئے دھرنے دینے والے پختونخوا کے عوام کی بھی خبر لیں ،انہوں نے کہا کہ عمران خان، وزیر اعلیٰ پرویز خٹک یا سیکرٹری ہیلتھ اس موقع پر احتجاج کرنے والی نرسوں سے مذاکرات کریں کیونکہ شدید گرمی میں اپنے حقوق کیلئے سڑکوں پر دھرنا دینا انتہائی کٹھن مرحلہ ہے، انہوں نے کہا کہ صوبے کے عوام اس وقت انتہائی کسمپرسی کی زندگی گزار رہے ہیں اور یہ حکمرانوں کیلئے باعث شرم ہے،میاں افتخار حسین نے کہا کہ تبدیلی کے دعوؤں کی حقیقت کھل کر سامنے آ گئی ہے ،صوبے کے عوام سے جینے کا حق چھین لیا گیا ہے ، انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت سے گزشتہ تین بجٹ لیپس ہو چکے ہیں اور اس بار بھی ان سے بہتری کی توقع رکھنا عبث ہے ، میاں افتخار حسین نے کہا کہ اے این پی عوامی مسائل پر سیاست نہیں کرتی بلکہ اس کے پاس سیاست کرنے کیلئے بہت مواد ہے ، انہوں نے کہا کہ ہم نے ہر دور میں عوام کے حقوق کی بات کی اور سابقہ اپنے دور حکومت میں عوام کے حقوق کے تحفظ کیلئے کام کیا ہے، مرکزی سیکرٹری جنرل نے سول سوسائٹی اور دیگر سیاسی جماعتوں سے بھی اپیل کی کہ احتجاج کرنے والی نرسوں کے ساتھ اظہار یکجہتی اور ان کے مطالبات کی منظوری کیلئے آواز اٹھائیں۔اے این پی کی خواتین رہنما شگفتہ ملک ، خدیجہ سردار اور ملگری ڈاکٹران کے صدر ڈاکٹر سعید الرحمان بھی اس موقع پر ان کے ہمراہ تھے۔