مورخہ 29فروری 2016ء بروز پیر

ناعاقبت اندیشی نے صوبے کو 7ارب روپے سے زائد کی رائلٹی سے محروم کر دیاگیا، ہارون بشیر بلور
پہلی بار مرکز میں نواز شریف کی حکومت آئی تو اُ سوقت کی اتحادی جماعت اے این پی نے مرکز کو بجلی منافع کیلئے مجبور کیا
خیبر پختونخوا کو بجلی اور سندھ و بلوچستان کو گیس کی رائلٹی میں ملنے والا منافع رہبر تحریک خان عبدالولی خان کی مرہون منت ہے
ایم ایم اے اور موجودہ صوبائی حکومتوں کی نا اہلی کے باعث مرکز صوبے کے 7کھرب 96ارب روپے ہڑپ کر چکا ہے۔

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی سیکرٹری اطلاعات ہارون بشیر بلور نے کہا ہے کہ خیبر پختونخوا کو بجلی اور سندھ و بلوچستان کو گیس کی رائلٹی میں ملنے والا منافع رہبر تحریک خان عبدالولی خان کی مرہون منت ہے تاہم گزشتہ دور میں ایم ایم اے اور موجودہ صوبائی حکومت نے صوبے کے حقوق پر سودے بازی کی اور خیبر پختونخوا کو اس کے جائز حق سے محروم کر دیا ، اے این پی سیکرٹریٹ سے جاری بیان میں انہوں نے کہا کہ بجلی کی مد میں صوبے کی رائلٹی مجموعی طور پر سات سو ارب سے زائد بنتی ہے لیکن ایم ایم اے کے دور میں اس وقت کی حکومت نے پرویز مشرف سے معاہدہ کیا اور معاہدے کے تحت ایم ایم اے حکومت صرف 110ارب روپے پر راضی ہوگئی حالانکہ اس وقت تک بقایا جات چھ سو ارب روپے تک پہنچ چکے تھے، صوبائی ترجمان نے کہا کہ پہلی بار مرکز میں نواز شریف کی حکومت آئی تو اُ سوقت کی اتحادی جماعت اے این پی نے مرکز کو بجلی منافع کیلئے مجبور کیا اور اے جی این قاضی کے نام سے ایک معاہدہ طے پایا جس میں مرکز نے خیبر پختونخوا کو بجلی کی رائلٹی اور تمام بقایا جات کی ادائیگی کا بھی وعدہ کیا،تاہم اُ س زمانے میں بار بار حکومتیں گرنے کی وجہ سے بقایا جات ادا نہیں کئے گئے،
ہارون بلورنے کہا کہ2005سے لے کر 2015ء تک خیبر پختونخوا کی بجلی کا منافع 381ارب روپے یعنی 3کھرب81ارب روپے ہو چکا ہے ،انہوں نے اس امر پر انتہائی افسوس کا اظہار کیا کہ تحریک انصاف کی موجودہ صوبائی حکومت نے نواز شریف حکومت سے مذاکرات میں صرف 70ارب روپے کے حصول پر اکتفا کیا،انہوں نے کہا کہ نواز شریف نے صوبے کی دولت سے ہی ایک معمولی خیرات دے کر صوبائی حکومت کو بے وقوف بنایا ،جبکہ پی ٹی آئی کی حکومت اپنی اس ناکامی کو چھپانے کیلئے اسے اپنی کامیابی قرار دے رہی ہے جبکہ حقیقت میں ایم ایم اے اور موجودہ صوبائی حکومتوں کی نا اہلی کے باعث مرکز صوبے کے 7کھرب 96ارب روپے ہڑپ کر چکا ہے۔