مورخہ 18مارچ 2016ء بروز جمعہ
مشرف کی آزادی کسی طور ملک و قوم کیلئے نیک شگون نہیں، سینیٹر زاہد خان
بدقسمتی سے پاکستان میں آمروں اور آمریت کو ہر بار عدالتوں سے ریلیف دیا گیا
جمہوری قوتیں آئین کی بالا دستی کیلئے اپنی جدوجہد جاری رکھیں گی،

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی سیکرٹری اطلاعات زاہد خان نے کہا ہے کہ آئینی مجرم پرویز مشرف کی عدالت سے رہائی اور حکومت کی طرف سے فیصلے کے خلاف اپیل کی بجائے نام ای سی ایل سے نکالنے سے آئین کے آرٹیکل 6کا مجرم عدالتی فیصلے سے آذاد ہو گیا ہے جو ملک اور قوم کیلئے کسی بھی طرح نیک شگون قرار نہیں دیا جا سکتا۔اپنے ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ آئین پارلیمنٹ کا محافظ ہوتا ہے عدلیہ کا فیصلہ جمہوریت کو کمزور کرنے اور آمرانہ سوچ کی مضبوطی کا عکاس ہے۔بدقسمتی سے پاکستان میں آمروں اور آمریت کو ہر بار عدالتوں سے ریلیف دیا گیا ۔عدالتوں کے فیصلے بولتے نہیں نظر آتے ہیں لیکن پاکستان کی عدالتی تاریخ کبھی بھی قوم کیلئے فخر کا باعث نہیں رہی۔عدالتی فیصلے کے خلاف حکومت کو اپیل کرنی چاہئے تھی ۔ ملک و قوم کے دشمن پرویز مشرف کا آذاد ہونا اور بیرون ملک روانگی باعث حیرت ہے ۔زاہد خان نے کہا کہ جمہوری قوتیں آئین کی بالا دستی کیلئے اپنی جدوجہد جاری رکھیں گی اور ملک میں بلا تمیز وتفریق قانون کی حکمرانی کو یقینی بنانے کیلئے اے این پی عوام کے ساتھ کھڑی رہیگی۔انہوں نے کہا کہ جب تک ملک میں قانون صرف بے بس افراد کے خلاف استعمال ہوتا رہیگا پرویز مشرف جیسے طاقتور آذاد ہو کر عدلیہ اور انتظامیہ کیلئے چیلنج بنتے رہیں گے۔