مورخہ : 7.5.2016 بروز ہفتہ

صوبائی حکومت روزگار دینے کی بجائے ملازم کش پالیسی پر گامزن ہے۔ ایمل ولی خان
ورکرز ویلفیئر بورڈ کے ملازمین کیساتھ کی جانے والی زیادتی کی مزاحمت کی جائے گی۔
ملازمین کو تنخواہوں سے محروم کرنا اور ان کی برطرفی ظلم اور زیادتی ہے۔

پشاور ( پریس ریلیز) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی ڈپٹی جنرل سیکرٹری ایمل ولی خان نے کہا ہے کہ حکومتیں عوام کو ملازمتیں ، روزگار اور مراعات دیتی ہیں تاہم صوبائی حکومت پہلے سے موجود ملازمتیں چھیننے کی مستقل پالیسی پر عمل پیرا ہیں۔
اُنہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت نے انتخابی مہم کے دوران صوبے کے عوام اور نوجوانوں کو ملازمتیں اور روزگار دینے کے بے شمار وعدے کیے تھے تاہم اقتدار میں آنے کے بعد حکومت نے روزگار دینا تو درکنار پہلے سے موجود ملازمین کو فارغ کرنا شروع کیا اور ورکرز ویلفئیر بورڈ اس کی ایک مثال ہے۔
ایمل ولی خان نے مزید کہا کہ ورکرز ویلفئیر بورڈ کے سینکڑوں ملازمین کئی مہینوں سے حکومت کی نااہلی اور غیر ذمہ داری کے باعث تنخواہوں سے محروم ہیں اور مسلسل احتجاج پر ہیں تاہم ان کے دُکھوں کامداوا کی بجائے ان میں سے اب بہت سوں کو ملازمتوں ہی فارغ کیا جا رہا ہے جو کہ قابل مذمت ہے۔ اُنہوں نے کہا کہ حکومت ملازم کش پالیسی پر گامزن ہے جس کی ہر فورم پر مزاحمت کی جائے گی۔