مورخہ 22مارچ 2016ء بروز منگل
ذخیرہ اندوزوں اور گرانفروشوں نے صوبے کے عوام کو یرغمال بنا رکھا ہے، ارباب محمد طاہر خان
پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی کے بعدگرانفروشوں نے انت مچا رکھی ہیجبکہ ضلعی انتظامیہ خاموش تماشائی بنی بیٹھی ہے
ملک کی معاشی پالیسیاں بیرون ملک سے بن کر آتی ہیں اور حکومت اپنے تئیں کچھ بھی کرنے کی اہل نہیں
خیبر پختونخوا کو معاشی اور اقتصادی مشکلات کا سامنا ہے، حکومت فوری نوٹس لے۔

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی سیکرٹری مالیات ارباب محمد طاہر خان خلیل نے پشاور سمیت خیبر پختونخوا میں مہنگائی کے ایک نئے طوفان پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے صوبائی حکومت اور ضلعی انتظامیہ سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے ۔اے این پی سیکرٹریٹ سے جاری بیان میں انہوں نے کہا کہ پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی کے بعد ذخیرہ اندوزوں نے انت مچا رکھی ہے اور اشیائے خوردونوش کی قیمتوں میں کمی کی بجائے ہوشربا اضافہ کر دیا ہے جبکہ ضلعی حکومتوں نے عوامی مسئلے پر آنکھیں موند رکھی ہیں ، انہوں نے کہا کہ سبزیوں سمیر دیگر اشیائے ضروریہ اب عوام کی دسترس سے باہر ہو چکے ہیں اور غریب عوام کی زندگی مزید مشکلات سے دوچار کر دی گئی ہے ، انہوں نے کہا کہ صوبے میں مہنگائی عروج پر پہنچ چکی ہے ، ارباب طاہر نے کہا کہ خیبر پختونخوا کے عوام پہلے ہی مہنگائی اور بے روزگاری کی وجہ سے پریشان حال تھے اس پرضلعی انتظامیہ کی پُراسرار خاموشی نے غریب عوام کی کمر مزید توڑ کر رکھ دی ہے ، انہوں نے اس بات پر افسوس کا اظہار کیا کہ ملک کی معاشی پالیسیاں بیرون ملک سے بن کر آتی ہیں اور حکومت اپنے تئیں کچھ بھی کرنے کی اہل نہیں ، انہوں نے کہا کہ گرانفروشوں کو صوبے میں کھلی چھٹی ہے اور صوبے میں ان پر ہاتھ ڈالنے والا کوئی نہیں جبکہ خیبر پختونخوا معاشی مشکلات سے دوچار ہے ،انہوں نے کہا کہ ہمارا صوبہ گزشتہ کئی دہائیوں سے نا مساعد حالات سے گزر رہا ہے اور اسے معاشی اور اقتصادی مشکلات کا سامنا ہے، انہوں نے کہا کہ حکومت فوری طور پر اس کا نوٹس لے اور ضلعی انتظامیہ کو اس بات کا پابند بنائے کہ ذخیرہ اندوزوں اور گرانفروشوں کے خلاف کاروائی یقینی بنا ئے تا کہ عوام سکھ کا سانس لے سکیں۔