مورخہ : 08-03-2016 بروز منگل

دہشت گردی اور شدت پسندی کے خلاف ہماری ماوں ،بہنوں کی قربانیاں رائیگاں نہیں جائیں گی۔
خواتین کو اپنے حقوق کے حصول کے لیے خود میدان میں آنا ہوگا،شگفتہ ملک

پشاور(پریس ریلیز) عوامی نیشنل پارٹی کی صوبائی جائنٹ سیکرٹری اور سابق ایم پی اے شگفتہ ملک نے کہا ہے کہ معاشرے میں آدھی اور ادھوری عورت کا رویہ ترک کرنا ہوگا، خواتین کو اپنے حقوق کے حصول کے لیے خود میدان میں آنا ہوگا، عالمی یوم خواتین کے حوالے سے اتحاد کالونی میں خواتین کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ اے این پی واحد قوم پرست جماعت ہے جو صنفی امتیاز کے خلاف اور خواتین کے حقوق کے لیے کمربستہ ہے،انہوں نے کہا کہ جس ملک اور معاشرے میں خواتین کے ساتھ امتیازی سلوک روا رکھا جاتا ہے ،وہ زندگی کے ہر شعبے میں پسماندگی کا شکار رہتا ہے، عورت کو صرف جنس کی نہیں بلکہ انسان کی نظر وں سے دیکھنا ہوگا،انہوں نے کہاکہ صوبے میں جاری دہشت گردی اور شدت پسندی کے خلاف ہماری ماؤں اور بہنوں نے جو قربانیاں دی ہیں ان کو فراموش نہیں کیا جاسکتا۔ ہماری تاریخ گواہ ہے کہ ہر قسم کے سیاسی اور سماجی حالات میں ہماری عورتیں بھی مردوں کے شانہ بشانہ کھڑی رہیں۔
شگفتہ ملک نے کہا کہ اے این پی کی سب سے بڑی انفرادیت یہ ہے کہ اس میں خواتین کا الگ ونگ قائم نہیں کیاگیا ہے جو اس بات کا ثبوت ہے کہ ہماری جماعت صنفی امتیاز پر یقین نہیں رکھتی ،انہوں نے اس عزم کا اعادہ کیا کہ جس طرح خدائی خدمتگار تحریک میں ہماری پختون عورتوں نے بڑھ چڑھ کرحصہ لیا تھا اسی طرح آج ہم بھی اے این پی کے جھنڈے تلے اپنے صوبے اور قوم کے حقوق کے لیے کسی بھی قربانی سے دریغ نہیں کریں گے۔