مورخہ 10مئی2016ء بروز منگل

تہترارب روپے کا بجٹ خسارہ چھپانے کیلئے بلدیاتی نمائندوں کے حقوق پر ڈاکہ ڈالا جا رہاہے،سردار حسین بابک
حکمران بلدیاتی نظام کا مذاق اُڑانا بند کر دیں ،عوام نے اپنے مسائل کے حل کیلئے نمائندوں پر اعتماد کا اظہار کیا ہے
ویلج کونسل اور نیبر ہوڈ کونسل سے فنڈز کی واپسی قابل مذمت ہے، اختیارات نچلی سطح تک منتقل کرنے کے دعوے جھوٹے نکلے
بلدیاتی نمائندے اپنے حقوق کیلئے میدان میں نکلیں اے این پی ان کے شانہ بشانہ ان کے ساتھ کھڑی ہو گی۔
بلدیاتی نمائندوں کے حقوق غصب کرنے کی پالیسی ترک نہ کی گئی تو اے این پی کسی بھی حد تک جانے کیلئے تیار ہے۔

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی جنرل سیکرٹری سردار حسین بابک نے کہا ہے کہ صوبائی حکومت اپنا73ارب روپے کا بجٹ خسارہ بچانے کیلئے بلدیاتی نمائندوں کے قانونی حقوق پر ڈاکہ ڈال رہی ہے تاہم اے این پی بلدیاتی نمائندوں کے خلاف انتقامی کاروائیوں اور ان کی حق تلفی پر خاموش نہیں رہے گی،اپنے ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ ویلج کونسل اور نیبر ہوڈ کونسل سے فنڈز کی واپسی قابل مذمت ہے، سردار حسین بابک نے کہا کہ حکمران بلدیاتی نظام اور عوامی نمائندوں کا مذاق اُڑانا بند کر دیں کیونکہ عوام نے اپنے مسائل کے حل کیلئے ان نمائندوں پر اعتماد کا اظہار کیا ہے ،انہوں نے کہا کہ حکومت اخلاقی جرأت کا مظاہرہ کرتے ہوئے بلدیاتی نمائندوں کی حیثیت تسلیم کرے ، انہوں نے اس امر پر افسوس کا اظہار کیا کہ گزشتہ ایک سال سے ایک کونسل کو بھی اسمبلی قانون کے مطابق فنڈز نہیں دیئے گئے ،اور جنہیں کم و بیش دیئے بھی گئے اب وہ بھی واپس لے لئے گئے ہیں ،انہوں نے کہا کہ عمران خان پور ے پاکستان میں اختیارات نچلی سطح تک منتقل کرنے کے جھوٹے دعوے کر رہے ہیں البتہ حالت یہ ہے عملاً 10ماہ سے صوبے کے طول و عرض میں بلدیاتی نمائندے اپنے قانونی فنڈز اور اختیارات کیلئے احتجاج پر ہیں ،صوبائی جنرل سیکرٹری نے بلدیاتی نمائندوں اور ویلج کونسلوں کے چیئرمینز سے کہا کہ اپنے حقوق کیلئے میدان میں نکلیں اے این پی ان کے شانہ بشانہ ان کے ساتھ کھڑی ہو گی۔
انہوں نے کہا کہ نیا پاکستان بنانے کے دعویداروں نے صوبے کے تمام محکموں کی شکل بگاڑ کر ان کا بیڑہ غرق کر دیا ہے ،اور بوکھلاہٹ کے عالم میں صوبائی حکومت نے عوامی نمائندوں کی حق تلفی شروع کر دی ہے ، انہوں نے متنبہ کیا کہ اگر بلدیاتی نمائندوں کے حقوق غصب کرنے کی پالیسی ترک نہ کی گئی تو اے این پی کسی بھی حد تک جانے کیلئے تیار ہے۔