2016 تعلیمی اداروں پر سیکورٹی فیس پی ٹی آئی جرمانہ ہے، سینیٹر زاہد خان

تعلیمی اداروں پر سیکورٹی فیس پی ٹی آئی جرمانہ ہے، سینیٹر زاہد خان

تعلیمی اداروں پر سیکورٹی فیس پی ٹی آئی جرمانہ ہے، سینیٹر زاہد خان

مورخہ 31جنوری 2016ء بروز اتوار
تعلیمی اداروں پر سیکورٹی فیس پی ٹی آئی جرمانہ ہے، سینیٹر زاہد خان
صوبائی حکومت بیرون ملک دوروں پر رقوم خرچ کررہی ہے اور صوبے کے عوام کیلئے فنڈ موجود نہیں
پشاور ( پ ر ) اے این پی کے مرکزی سیکرٹری اطلاعات سینیٹر زاہد خان نے خیبر پختون خواہ حکومت کی طرف سے تعلیمی اداروں کی سیکورٹی کے نام پر طلباء سے اضافی فیس وصول کرنے کو پی ٹی آئی جرمانہ قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ بجائے تعلیمی اداروں کی حفاطت کویقینی بنانے کی ، حکومت ، طلباء اور والدین کو ذہنی اذیت میں مبتلا کررہی ہے ۔ پی ٹی آئی اور صوبائی حکومت کے ارب پتی رہنما ، وزراء اور ممبران صوبائی اسمبلی بیرون ملک دوروں، عیاشیوں پر رقوم خرچ کررہے ہیں اور صوبے کے عوام کیلئے فنڈ موجود نہیں۔ باچا خان یونیورسٹی کے شہداء اور زخمیوں کے لواحیقین کا کوئی پرسان حال نہیں۔ ان کی مدد کیلئے باچا خان یونیورسٹی میں امدادی فنڈ قائم نہ کرنا صوبائی حکومت کے لئے شرمناک ہے۔

شیئر کریں