مورخہ 2جون 2016ء بروزجمعرات
بارش متاثرین کی داد رسی کیلئے سب کو میدان میں نکلنا ہوگا، امیر حیدر خان ہوتی
صوبائی حکومت کو مصیبت کی اس گھڑی میں عوام کی آباد کاری اور ضروریات زندگی بہم پہنچانے کیلئے کام شروع کرنا چاہئے
عوامی نیشنل پارٹی متاثرین کے دکھ اور تکلیف میں برابر کی شریک ہے اور پارٹی کسی طور متاثرین کو تنہا نہیں چھوڑے گی
حکومت کو حالیہ بارشوں کی وجہ سے ممکنہ نقصانات کے ازالے اورمستقبل میں ناگہانی صورتحال کیلئے الرٹ رہنا ہوگا،

پشاور ( پ ر ) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی صدر امیر حیدر خان ہوتی نے پشاور سمیت صوبہ بھر اور قبائلی علاقوں میں حالیہ بارشوں سے ہونے والی تباہی پر گہرے رنج و غم کا اظہار کرتے ہوئے قدرتی آفت کے نتیجے میں 10سے زائد جاں بحق ہونے والے افراد کیلئے مغفرت اورزخمیوں کی جلد صحت یابی کیلئے دعا کی ہے، اپنے ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ قدرتی آفت کی وجہ سے قومی و ذاتی املاک کو نقصان پہنچنا افسوس ناک ہے ،اور ایسی صورتحال میں صوبائی حکومت کو اپنی تمام توجہ متاثرین کو فوری امداد بہم پہنچانے کیلئے مرکوز کرنی چاہئے ، امیر حیدر خان ہوتی نے کہا کہ حالیہ بارشوں کی وجہ سے ذاتی املاک کو بھی نقصان پہنچا ہے دکھ کی اس گھڑی میں تمام غیر سرکاری تنظیموں کو بھی بڑھ چڑھ کر حصہ لینا چاہئے تا کہ متاثرین کی داد رسی ہو سکے اور جس حد تک ممکن ہو سکے ان کی امداد کی جائے ،انہوں نے کہا کہ کوئی بھی دوسری چیز انسانی جانوں کا نعم البدل نہیں ہو سکتی تاہم انہوں نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ جاں بحق ہونے والوں کے لواحقین کی فوری طور پر مالی امداد کی جائے ،اور زخمیوں کو بہترین طبی سہولیات کی فراہمی کیلئے مؤثر اقدامات کئے جائیں ، انہوں نے کہا کہ مصیبت کی اس گھڑی میں سب کی ذمہ داری ہے کہ وہ اپنے متاثرہ بہن بھائیوں کی امداد کیلئے عملی اقدامات اٹھائیں ، انہوں نے کہا کہ صوبائی حکومت کو مصیبت کی اس گھڑی میں بارشوں سے متاثر ہونے والے عوام کی آباد کاری اور ضروریات زندگی بہم پہنچانے کیلئے کام شروع کرنا چاہئے ۔صوبائی صدر نے صوبائی حکومت سے نقصانات کا فوری طور پر جائزہ لینے ، تخمینہ لگانے اور متاثرین کے ساتھ فوری امداد کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ صوبائی حکومت کو تمام تر توجہ ممکنہ حادثات سے نمٹنے پر مرکوز رکھنی چاہئے، انہوں نے کہا کہ عوامی نیشنل پارٹی متاثرین کے دکھ اور تکلیف میں برابر کی شریک ہے اور پارٹی کسی طور متاثرین کو تنہا نہیں چھوڑے گی،انہوں نے کہا کہ مختلف ہسپتالوں میں زیر علاج زخمیوں کو بہتر طبی سہولیات کی فراہمی بھی یقینی بنائی جائے۔